کرم ایجنسی میں کارروائی کے دوران دو ’بھارتی ایجنٹس‘ گرفتار

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption ’ملزمان کرم ایجنسی میں دہشت گردی اور فرقہ وارانہ فسادات پھیلانے میں مصروف تھے‘

پاکستان کے قبائلی علاقے کرم ایجنسی کے حکام نے دعویٰ کیا ہے کہ سکیورٹی فورسز نے مبینہ طور پر بھارتی انٹیلی جینس ادارے ’را‘ سے تعلق رکھنے والے دو افراد کو کرم ایجنسی کے علاقے پاراچنار سے گرفتار کیا ہے۔

سرکاری ذرائع ابلاغ کے مطابق دونوں مبینہ ایجنٹوں کو 19 ستمبر کو گرفتار کیا گیا تھا مگر انہیں آج میڈیا کے سامنے پیش کیا گیا۔

را کے مبینہ ایجنٹوں کو ایک انٹیلی جینس آپریشن کے دوران سکیورٹی اداروں نے حراست میں لیا تھا۔

اسسٹنٹ پولیٹیکل ایجنٹ کرم ایجنسی شاہد اللہ کا کہنا ہے کہ ’تفتیش کے دوران زیرحراست ملزمان نے بھارتی ایجنسی را کے لیے کام کرنے کا اعتراف کیا ہے۔‘

انہوں نے مزید کہا ’ملزمان کرم ایجنسی میں دہشت گردی اور فرقہ وارانہ فسادات پھیلانے میں مصروف تھے‘۔

ان کے بقول ’دونوں افراد کے قبضے سے ایل لاکھ 78 ہزار بھارتی کرنسی اور تین سو امریکی ڈالر سمیت سکیورٹی فورسز کی وردیاں برآمد کی گئی ہیں۔‘

اسی بارے میں