رشید گوڈیل پر حملے کے دو ملزمان کو گرفتار کرنے کا دعویٰ

Image caption متحدہ قومی موومنٹ کے رکنِ قومی اسمبلی رشید گوڈیل 18 اگست کو ایک قاتلانہ حملے میں زخمی جبکہ ان کا ڈرائیور ہلاک ہوگیا تھا

آئی جی سندھ غلام حیدر جمالی نے دعویٰ کیا ہے کہ رکنِ قومی اسمبلی رشید گوڈیل پر حملے میں ملوث دو ملزمان کو گرفتار کر لیاگیا ہے۔

کراچی میں منگل کو صوبائی کابینہ کے اجلاس کو آئی جی سندھ نے آگاہ بتایا کہ متحدہ قومی موومنٹ کے رکنِ قومی اسمبلی پر حملے کے ملزمان میں سے ایک کو حیدر آباد اور ایک کو کراچی سے گرفتار کیا گیا ہے۔

آئی جی نے ملزمان کی وابستگی اور حملے کی وجوہات بیان نہیں کیں تاہم صرف اتنا کہا کہ وہ چند دنوں میں کابینہ کو تفصیلی بریفنگ دیں گے۔

رشید گوڈیل حملہ: ’استعمال ہونے والی نائن ایم ایم کا ریکارڈ موجود نہیں‘

ایم کیو ایم رہنما رشید گوڈیل قاتلانہ حملے میں شدید زخمی

خیال رہے کہ متحدہ قومی موومنٹ کے رکنِ قومی اسمبلی رشید گوڈیل 18 اگست کو ایک قاتلانہ حملے میں زخمی جبکہ ان کا ڈرائیور ہلاک ہوگیا تھا۔ رشید گوڈیل کئی روز تک وینٹیلیٹر پر رہے۔

آئی جی پولیس سندھ غلام حیدر جمالی نے کابینہ کو بتایا کیا کہ محرم الحرام میں قیامِ امن کے انتظامات کے لیے 102 ملین روپے درکار ہیں، جن میں 24.9 ملین روپے پیٹرول، دس ملین روپے واک تھروگیٹس اور سی سی ٹی وی کیمروں، پانچ ملین روپے میگافونز، ٹینٹ وغیرہ کی خریداری کے لیے اور 62.5 ملین روپے فیڈنگ چارجز کی مد میں درکار ہیں۔

وزیرِ اعلیٰ ہاؤس کے اعلامیے کے مطابق صوبائی وزیرِ خزانہ سید مراد علی شاہ نے تجویز پیش کی کہ اگر محکمہ آئی ٹی سے، سی سی ٹی وی کیمرے حاصل کیے جائیں تو پیسوں کی کافی بچت ہوگی اسی طرح مختلف محکموں سے گاڑیاں حاصل کر کے اس ضرورت کو پورا کیا جاسکتا ہے۔

واضح رہے کہ سندھ میں محرم الحرام کے دوران کراچی کے علاوہ خیرپور، شکارپور اور شہداد کوٹ کو حساس قرار دیا گیا ہے۔

دوسری جانب وزیراعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ نے یکم محرم کو یوم عمر فاروق پر کراچی میں تعلیمی اداروں میں عام تعطیل کا اعلان کیا ہے۔ صوبائی حکومت کے اس فیصلے کا اہل سنت و الجماعت کے رہنما علامہ احمد لدھیانوی نے خیرمقدم کیا ہے۔

سید قائم علی شاہ نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ضابطۂ اخلاق اور انسداد دہشت گردی قوانین کے تحت کسی کو بھی شر انگیز تقاریر یا قابل اعتراض مواد کی تقسیم کی اجازت نہیں ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ یہ حکومت کے فرائض میں شامل ہے کہ یکم محرم تا چہلم تک ہونے والے ماتمی جلوسوں، مجالس کے دوران امن و امان کو یقینی بنائے۔

اسی بارے میں