’دو سال میں بھارت نے 997 بار سرحد کی خلاف ورزی کی‘

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

پاکستان کے ایوانِ بالا یعنی سینٹ کو ایک تحریری جواب میں بتایا گیا ہے کہ بھارتی مسلح افواج نے گذشتہ دو سال کے دوران لائن آف کنٹرول اور ورکنگ باؤنڈری کی 997 مرتبہ خلاف ورزی کی ہے۔

ان خلاف ورزیوں کے دوران 70 افراد ہلاک ہوئے جن میں فوجی اور عام شہری دونوں شامل ہیں۔

وزارتِ دفاع کی جانب سے جمع کروائے گئے تحریری جواب میں کہا گیا ہے کہ بھارتی مسلح افواج کی جانب سے رواں سال کے دوران لائن آف کنٹرول اور ورکنگ بانڈری پر بلا اشتعال فائرنگ کے نتیجے میں 34 افراد ہلاک ہوئے جن میں 33 عام شہری شامل ہیں۔

ورکنگ باونڈری پر بھارت اور پاکستان کے درمیان فائرنگ

ایل او سی پر بھارتی فوج کی فائرنگ سے ایک خاتون ہلاک

تحریری جواب میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ سنہ 2013 کے دوران بھارتی افواج کی ورکنگ بانڈری اور لائن آف کنٹرول کی 464 مرتبہ خلاف ورزیوں اور بلا اشتعال فائرنگ کے نتیجے میں 16 افراد ہلاک ہوئے، جن میں دس فوجی بھی شامل ہیں۔

بھارتی افواج نے رواں سال کے دوران 218 مرتبہ پاکستانی حدود کی خلاف ورزی کی اور اس دوران فائرنگ کے نتیجے میں 34 افراد ہلاک ہوئے۔

وزارتِ دفاع کی جانب سے ایوان میں دیے گئے تحریری جواب میں بتایا گیا ہے کہ سنہ 2013 میں بھارتی افواج نے باغ سیکٹر میں پاکستانی چوکی پر حملہ کرنے کی کوشش کی تاہم بروقت کارروائی کرتے ہوئے اس حملے کو ناکام بنا دیاگیا۔

ایک سوال کے جواب میں وزیرِ دفاع خواجہ آصف نے بتایا کہ آپریشن ضربِ عضب میں شمالی وزیرستان کا 89 فی صد حصہ، جبکہ خیبر ایجنسی کا 87 فی صد حصہ شدت پسندوں سے صاف کروا لیا گیا ہے۔

وزیرِ دفاع کے مطابق دہشت گردوں کے خلاف اس لڑائی میں پاکستانی افواج کے 350 سے زائد اہلکار ہلاک ہو چکے ہیں۔

ایک سوال کے جواب میں وفاقی وزیرِ داخلہ چوہدری نثار علی خان نے بتایا کہ اس وقت ملک بھر میں 122 بین الاقوامی غیر سرکاری تنظمیں کام کر رہی ہیں جن میں سے صرف 19 تنظیمیں اندراج شدہ ہیں جبکہ 27 تنظیموں کو عارضی طور پر کام کرنے کی اجازت دی گئی ہے۔

وزارتِ داخلہ کے مطابق اس وقت ملک بھر میں غیر اندراج شدہ بین الاقوامی تنظیموں کی تعداد 67 ہے۔

اسی بارے میں