شدید سردی، لینڈ سلائیڈ سے زلزلہ متاثرین کو دشواری

پاکستان کے صوبہ خیبر پختونخوا میں زلزلے سے متاثرہ علاقوں میں بارشوں اور برف باری سے کہیں سڑکیں بند ہیں تو کہیں خمیوں میں گزارا ممکن نہیں رہا جبکہ کوہستان سے آگے شاہراہ قراقرم اور اور کاغان روڑ لینڈ سلائیڈ کے وجہ سے بند ہو گئی ہیں۔

محکمہ موسمیات کے مطابق سب سے زیادہ بارش کوہستان کے علاقوں میں ہوئی ہے۔

دس سال بعد اکتوبر میں ایک اور زلزلہ: ضمیمہ

کیا ہم افغانستان یا ہندوستان سے آئے ہیں؟

سرد موسم نے زلزلہ متاثرین کی زندگی مشکل بنا دی

چترال کے بیشتر علاقوں میں زلزلہ زدگان مشکلات کا شکار ہیں جہاں لوگوں کو اب تک امداد نہیں ملی۔ لاسپور گاؤں میں برف باری ہوئی ہے جبکہ چرون اویر میں لوگوں نے احتجاج کر کے روڈ بلاک کر دی۔ چرون اویر کے رہائشی عنایت اللہ نے بتایا کہ ان کے گاؤں میں بچوں میں بیماریاں پھیل رہی ہیں۔

لاسپور چترال سے کوئی ڈیڑھ سو کلومیٹر دور شندور کے قریب واقع ہے جہاں مقامی لوگوں کے مطابق شدید بارشوں اور برف باری سے ان کے خیمے ناکارہ ہو گئے ہیں جبکہ ان کے گاؤں میں نقصانات کے اندازے کے لیے سرکاری ٹیمیں تو پہنچی ہیں لیکن اب تک انھیں امداد فراہم نہیں کی گئی۔

ان لوگوں کا کہنا تھا کہ غیر سرکاری تنظیموں کی جانب سے کچھ امداد ملی ہے لیکن اب ان کے گاؤں میں لوگ بیمار ہیں اور ادویات کی کمی ہے۔

لاسپور میں روزگار کا بڑا ذریعہ مال مویشی ہیں اور حالیہ زلزلے سے نہ صرف لوگوں کے رہائشی کمرے گر گئے ہیں بلکہ مال مویشی بھی چھت سے محروم ہیں۔

مستوج کے قریب چرون اویر گاؤں میں جمعہ کو لوگوں نے احتجاج کیا اور مستوج شاہراہ کئی گھنٹے تک بند رہی۔

مقامی لوگوں کے مطابق کوئی درجنوں لوگ احتجاج میں شامل تھے۔ ان کا کہنا تھا کہ اس شدید سردی میں جب آٹھ انچ تک برف پڑی ہو یہ ناقص خیمے کام نہیں کرتے حکومت کو چاہیے کہ انھیں بہتر شلٹرز دیں اور خوراک کے علاوہ ادویات فراہم کی جائیں۔

چرون اویر کے رہائشی عنایت اللہ نے بتایا کہ ان کے علاقے میں نمونیا اور کھانسی کے امراض تیزی سے پھیل رہے ہیں۔

چترال سے منتخب رکن قومی اسمبلی افتخار الدین نے بی بی سی کو بتایا کہ وفاقی اور صوبائی حکومتوں نے وعدے کیے ہیں اور کچھ امداد بھی پہنچی ہے لیکن اب تک تمام افراد کو یہ امداد نہیں مل سکی۔

ان کا کہنا تھا کہ وہ یہ مسئلے قومی اسمبلی میں پیش کریں گے اور انھیں یہ کہا گیا ہے کہ وفاقی حکومت جلد فنڈز جاری کر دے گی۔

اسی بارے میں