صوبہ پنجاب میں تمام سکول سردی کے باعث 31 جنوری تک بند

تصویر کے کاپی رائٹ epa
Image caption نوٹیفیکیشن میں کہا گیا ہے کہ یہ بندش صرف سکولوں کے لیے ہے اور تمام کالجز اور یونیورسٹٰیاں معمول کے مطابق تعلیم کا سلسلہ جاری رکھیں گی

پاکستان کے صوبہ پنجاب کی حکومت نے شدید سردی کے باعث صوبہ بھر کے نجی و سرکاری سکولوں کو آج یعنی منگل سے فوری طور پر ایک ہفتے کے لیے بند کرنے کا اعلان کیا ہے۔

سکولوں کی بندش کا اعلان پیر اور منگل کی درمیانی شب کو کیا گیا جس کہاگیا کہ سردی کی شدید لہرکے باعث طلبا و طالبات کو مشکلات کا سامنا ہے۔

لاہور سے صحافی عبدالناصرخان کے مطابق حکومت نے اعلان کیا کہ اس لئے حکومت نے تمام نجی و سرکاری سکول 31 جنوری تک بند رکھنے کا فیصلہ کیا ہے۔

نوٹیفیکیشن میں کہا گیا ہے کہ یہ بندش صرف سکولوں کے لیے ہے اور تمام کالجز اور یونیورسٹٰیاں معمول کے مطابق تعلیم کا سلسلہ جاری رکھیں گی۔

دوسری جانب دارالحکومت اسلام آباد میں بھی چند نجی سکولوں نے چھٹیاں کر دی ہیں۔ تاہم زیادہ تر نجی اور سرکاری سکول کھلے ہیں۔

حاد رہے کہ 2 جنوری کو پنجاب کی وزارتِ تعلیم نے سکولوں میں معمول کی اسمبلی گراؤنڈ کے بجائے عارضی طور پر کلاس رومز میں کروانے کا حکم جاری کیا تھا اور طلبہ، اساتذہ اور مقامی آبادی کی حفاظت کے لیے 1122، سول ڈیفینس اور دیگر اداروں کو فرضی مشقیں کرنے کی ہدایت بھی کی گئی تھی۔

محکمہ تعلیم کے اہلکار کا کہنا تھا ملک کی موجودہ صورتحال میں صوبے بھر کے سکولوں کے متعلقہ حکام کو ہدایت جاری کی گئی ہیں کہ وہ عارضی طور پر اسمبلی معمول کے مطابق گراؤنڈ کے بجائے جماعت میں ہی کرایا کریں۔

اسی بارے میں