ایم کیو ایم کے ڈپٹی کنوینر 90 دن کے لیے حراست میں

Image caption متحدہ قومی موومنٹ کے مرکزی رہنما اور سابق رکن قومی اسمبلی انیس ایڈووکیٹ مصطفیٰ کمال کے ساتھ شامل ہوگئے ہیں

کراچی میں رینجرز نے متحدہ قومی موومنٹ کے ڈپٹی کنوینر شاہد پاشا کو 90 روز کے لیے حراست میں لے لیا ہے، انھیں گذشتہ شب گرفتار کیا گیا تھا۔

’جنرل راحیل دوستی کا ہاتھ بڑھائیں‘’الطاف حسین نے خطاؤں کو کبھی تسلیم نہیں کیا‘

رینجرز نے شاہد پاشا کو پیر کی دوپہر کو انسداد دہشت گردی کی عدالتوں کے انتظامی جج جسٹس محمد فاروق شاہ کی عدالت میں پیش کیا، رینجرز کے قانونی افسر نے عدالت کو آگاہ کیا کہ شاہد پاشا مبینہ طور پر ٹارگٹ کلنگ اور بھتہ خوری میں ملوث ہیں ان سے تفتیش کرنی ہے اس لیے انھیں 90 روز کے لیے حراست میں لیا گیا ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ mqm
Image caption رینجرز کے قانونی افسر نے عدالت کو آگاہ کیا کہ شاہد پاشا مبینہ طور پر ٹارگٹ کلنگ اور بھتہ خوری میں ملوث ہیں

اس سے قبل ایم کیو ایم کے ترجمان واسع جلیل نے سماجی ویب سائٹ ٹوئٹر پر لکھا تھا کہ شاہد پاشا کو گلستان جوہر میں ان کے گھر سے گرفتار کیا گیا ہے۔

دوسری جانب متحدہ قومی موومنٹ کے مرکزی رہنما اور سابق رکن قومی اسمبلی انیس ایڈووکیٹ مصطفیٰ کمال کے ساتھ شامل ہوگئے ہیں۔

انیس ایڈووکیٹ کا کہنا تھا کہ وہ ذہنی طور پر اس قافلے میں تین سال قبل شامل ہو چکے تھا، انھیں معلوم تھا کہ ایک وقت آئے گا جب لوگوں کی زبان کے تالے ٹوٹیں گے۔

ان کا مطابق تین سال پہلے جب انھوں نے ایم کیو ایم کو چھوڑا تو یقیناً ان کے لیے یہ ایک عجیب سی بات تھی۔’میں نے برملا کہا کہ یہ غلط ہوا اور یہ کہہ کر گیا تھا تم نے اپنی قبر میں کیل ٹھوک دی ہے۔‘

انیس ایڈووکیٹ کے مطابق انھوں نے 32 سال ایک شخص کے ساتھ گزارے لیکن اب ان کے پاس اور کوئی راستہ نہیں ہے عوام کارکنوں ان لوگوں کے سامنے آئیں جو ان کے لیے سب کچھ قربان کر چکے ہیں، اپنے خاندانوں کو چھوڑ کر فوج سے لڑ گئے انھوں نے یہ نہیں دیکھا کہ وہ اپنے وطن کی فوج سے لڑنے جا رہے ہیں انھوں نے تو صرف یہ دیکھا کہ یہ شخص کہیں نہ کہیں پہنچائے گا ہاں یقیناً کہیں نہ کہیں تو پہنچا ہی دیا۔

انیس ایڈووکیٹ کا کہنا تھا کہ اس وقت آپ کی یہ صورتحال نہیں ہے کہ آپ مہاجروں قوم کی قیادت کرسکیں آپ نے مہاجر قوم کو ایک ایسی جگہ پر لاکھڑا کیا ہے جس کے آگے کھائی اور پیچھے گڑھا ہے، آپ نے جو منشور اور پروگرام دیا تھا آپ اس کے ٹریک سے ہٹتے گئے اور اپنی ذات میں انجمن بن گئے اب آپ کو گناہوں کا ازالہ کرنا ہوگا۔‘

اسی بارے میں