’ماسکو ایئرپورٹ پر پھنسے 48 پاکستانی واپس پہنچ گئے‘

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption مقامی ذرائع ابلاغ کے مطابق پاکستان سے تعلق رکھنے والے 130 سے زائد پاکستانی تاجروں کو گذشتہ روز ماسکو ایئرپورٹ پہنچنے پر روک لیا گیا تھا

پاکستان کے سرکاری ٹی وی کے مطابق دفترِ خارجہ کے ترجمان نے کہا ہے کہ روس کے دارالحکومت ماسکو کے ایئرپورٹ پر پھنسے 48 پاکستانی شہریوں کوواپس لایا جاچکا ہے جبکہ دیگر 84 کو واپس لایا جا رہا ہے۔

جمعرات کو اسلام آباد میں ہفتہ وار بریفنگ کے دوران دفترخارجہ کے ترجمان نفیس ذکریا نے بتایا کہ ماسکو میں پھنسے پاکستانیوں کی مدد کے لیے پاکستانی سفارتخانہ مدد کر رہا ہے۔

مقامی ذرائع ابلاغ کے مطابق پاکستان سے تعلق رکھنے والے 130 سے زائد پاکستانی تاجروں کو گذشتہ روز ماسکو ایئرپورٹ پہنچنے پر روک لیا گیا تھا۔

ترجمان دفتر خارجہ کا کہنا تھا کہ ماسکو میں پاکستانیوں کی مدد کے لیے پاکستانی سفارتخانے کا عملہ روسی حکام کے ساتھ رابطے میں ہیں۔

اطلاعات کے مطابق یہ افراد ماسکو میں ایک تقریب میں شرکت کے لیے ماسکو پہنچے تھے۔

ایرانی صدر حسن روحانی کے دورہ پاکستان کے حوالے سے نفیس ذکریا کا کہنا تھا کہ ایرانی صدر جمعے کو پاکستان کا دو روزہ سرکاری دورہ کر رہے ہیں جس میں دوطرفہ تعلقات، باہمی دلچسپی اور علاقائی امور پر تبادلہ خیال کیا جائے گا۔

ترجمان کے مطابق ایرانی صدر وزیراعظم پاکستان نواز شریف کی دعوت پر پاکستان کا دورہ کر رہے ہیں۔

خیال رہے کہ نواز شریف نے رواں سال جنوری اور مئی 2014 میں ایران کا دورہ کیا تھا۔

ترجمان دفتر خارجہ نی مزید بتایا کہ بھارتی ریاست پنجاب کے شہر پٹھان کوٹ میں فـضائیہ کے اڈے پر حملے کی تحقیقاتی ٹیم 27 مارچ کو بھارت جائے گی۔

دفتر خارجہ کے ترجمان کے مطابق وزیراعظم جوہری سلامتی کے اجلاس میں شرکت کے لیے 31 مارچ کو امریکہ جائیں گے۔

اسی بارے میں