عمران خان کی جلسے میں’خواتین کو ہراساں کرنے پر معافی‘

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption ’ان واقعات کی تحقیقات کے لیے کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے‘

پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان نے اسلام آباد میں پارٹی کے یومِ تاسیس کے موقع پر جلسہ عام میں خواتین کو ہراساں کرنے کے واقعات پر معافی مانگی ہے۔

عمران خان نے ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں کہا ہے کہ آئندہ ایسے واقعات کبھی نہیں ہونے دیں گے اور لاہور سے شروع ہونے والے جلسوں میں خواتین کے تحفظ کے لیے سخت اقدامات کیے جائیں گے۔

’اسلام آباد میں یوم تاسیس کے جلسے میں جن خواتین کے ساتھ جو بھی ہوا اس پر ان تمام سے معافی مانگنا چاہتا ہوں۔‘

عمران خان نے مزید کہا ہے کہ واقعات کی تحقیقات کے لیے ایک کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے جو ویڈیو شواہد سیمت تمام معاملات کا جائزہ لے گی تاکہ قصور واروں کو سزا دی جا سکے۔

انھوں نے مزید کہا ہے کہ اسلام آباد میں جگہ کم تھی اور ہجوم بہت زیادہ تھا لیکن مستقبل میں فول پروف انتظامات کیے جائیں گے تاکہ ایسے واقعات پیش نہ آئیں۔

گذشتہ اتوار کو دارالحکومت اسلام آباد میں تحریک انصاف کے 20ویں یومِ تاسیس کے موقع پر ایک جلسہ عام منعقد کیا گیا تھا جس میں عمران خان سمیت پارٹی کے دیگر رہنماؤں نے خطاب کیا تھا۔

مقامی ٹی وی چینلز پر دکھائی جانے والی ویڈیوز میں جلسے میں موجود افراد کی جانب سے متعدد خواتین کو ہراساں کیے جانے کے واقعات کو دیکھا گیا ہے۔

اسی بارے میں