کوئٹہ میں پولیس پر حملے، چار اہلکار ہلاک

تصویر کے کاپی رائٹ EPA

پاکستان کے صوبہ بلوچستان کے دارالحکومت کوئٹہ کی سریاب کے علاقے میں فائرنگ کے دو مختلف واقعات میں چار پولیس اہلکار ہلاک ہوئے۔

پولیس اہلکاروں پر یہ حملے دو گھنٹوں کے دوران نامعلوم افراد نے سریاب کے علاقے میں کیے۔

سریاب پولیس کے اہلکار نے بتایا کہ ایک حملہ شالکوٹ پولیس کی گاڑی پر کیا گیا۔ اس حملے میں نشانہ بننے والی گاڑی میں شالکوٹ پولیس کے ایس ایچ او کا ڈرائیور اور گن مین سوار تھے جو حملے کے نتیجے میں ہلاک ہوئے۔

پولیس اہلکاروں پر دوسرا حملہ مین سریاب روڈ پر ہوا۔ پولیس اہلکار نے بتایا کہ سبی پولیس سے تعلق رکھنے والے دو اہلکار ایک گاڑی میں کوئٹہ شہر کی جانب آرہے تھے۔

اہلکار کے بقول جب ان کی گاڑی سریاب کے علاقے میں پہنچی تو دو نامعلوم مسلح موٹر سائیکل سواروں نے گاڑی پر حملہ کیا۔ اس حملے کے نتیجے میں دونوں پولیس اہلکار موقع پر ہلاک ہوگئے۔

پولیس اہلکاروں پر حملوں کا مقدمہ درج کرکے تحقیقات شروع کردی گئی ہیں۔ پولیس اہلکار کے مطابق اب تک حاصل ہونے والے شواہد کے مطابق یہ ٹارگٹ کلنگ کے واقعات ہیں۔

رواں ماہ میں کوئٹہ شہر میں پولیس اہلکاروں پر یہ چوتھا حملہ ہے۔ اس سے قبل ہونے والے تین حملوں میں تین پولیس اہلکار ہلاک اور دو زخمی ہوئے تھے۔

رواں سال کے دوران اب تک پولیس پر فائرنگ کے واقعات اور بم حملوں میں کوئٹہ شہر میں 32 اہلکار ہلاک اور متعدد زخمی ہوئے ہیں۔

اسی بارے میں