’راجن پور میں جھڑپ کے دوران پانچ شدت پسند ہلاک‘

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption پولیس کے مطابق ہلاک ہونے والے شدت پسندوں کی شناخت کی جا رہی ہے

پاکستان کے صوبہ پنجاب کی پولیس کا کہنا ہے کہ ضلع راجن پور کے علاقے روجھن میں انسداد دہشت گردی کے ادارے (سی ٹی ڈی) نے آپریشن میں کالعدم تحریک طالبان پاکستان اور لشکر جھنگوی کے پانچ شدت پسندوں کو ہلاک کر دیا ہے۔

پنجاب پولیس کی ترجمان نبیلہ غضنفر نے بی بی سی اردو کو بتایا کہ سی ٹی ڈی کو اطلاع ملی تھی کہ چند شدت پسند راجن پور کے علاقے کرد چوک کے قریب موجود ہیں۔

نبیلہ غضنفر کا کہنا ہے کہ ’سی ٹی ڈی نے آپریشن کیا اور شدت پسندوں کے ساتھ فائرنگ کے تبادلے میں پانچ شدت پسند مارے گئے جبکہ دو سے تین شدت پسند فرار ہونے میں کامیاب ہو گئے۔‘

ان کا کہنا تھا کہ یہ آپریشن سی ٹی ڈی ملتان اور راجن پور پولیس کا مشترکہ آپریشن تھا۔

ترجمان نے مزید بتایا کہ ہلاک ہونے والے شدت پسندوں کی شناخت کی جا رہی ہے۔

یاد رہے کہ اس قبل گذشتہ دونوں پاکستان کے صوبہ پنجاب کے محکمۂ انسدادِ دہشت گردی نے اوکاڑہ کے قریب ایک مقابلے میں چھ شدت پسندوں کو ہلاک کرنے کا دعوی کیا تھا۔

پولیس حکام کا کہناتھا کہ جھڑپ کے دوران شدت پسندوں کی فائرنگ سے دو پولیس اہلکار بھی زخمی ہوئے تھے۔

ڈی پی او اوکاڑہ فیصل رانا نے بتایا تھا کہ جائے وقوعہ سے کلاشنکوف، راکٹ لانچر اور گولیوں سمیت بھاری مقدار میں اسلحہ، دھماکہ خیز مواد اور نقشے بھی برآمد ہوئے تھے۔

خیال رہے کہ رواں برس مارچ میں لاہور کے گلشنِ اقبال پارک میں بم دھماکے کے بعد سے صوبہ پنجاب میں محکمۂ انسدادِ دہشت گردی کی کارروائیوں میں تیزی دیکھی گئی ہے اور اب تک کی جانے والی کارروائیوں کے دوران درجنوں شدت پسندوں کی ہلاکت کے دعوے کیے گئے ہیں۔

اسی بارے میں