’سانحۂ کوئٹہ میں ایجنسیوں کی ناکامی نظر آتی ہے‘

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption خورشید شاہ کا کہنا تھا کہ نیشنل ایکشن پلان مکمل طور پر ناکام ہو گیا ہے

قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف سید خورشید شاہ نے کہا ہے کہ سانحۂ کوئٹہ میں یقیناً ایجنسیوں کی ناکامی نظر آتی ہے۔

وہ جمعرات کو بلوچستان ہائی کورٹ کی عمارت میں وکلا سے سانحۂ کوئٹہ پر تعزیت کے بعد میڈیا سے گفتگو کر رہے تھے۔

* ’سانحہ کوئٹہ اور ضربِ عضب پر فوج سے بریفنگ لی جائے‘

٭ ’فوجی عدالتیں چند ماہ کی مہمان ہیں‘

٭ کوئٹہ کے سول ہسپتال میں دھماکہ، ’69 افراد ہلاک‘

انھوں نے کہا ’پارلیمان میں ان واقعات پر بحث ہو رہی ہے جو کہ مناسب فورم ہے۔‘

خورشید شاہ کا کہنا تھا کہ نیشنل ایکشن پلان مکمل طور پر ناکام ہو گیا ہے۔

انھوں نے کہا کہ اگر نیشنل ایکشن پلان پر مکمل عملدرآمد ہوتا تو ملک سے دہشت گردی کا خاتمہ ہو جاتا۔

قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف نے مزید کہا ’یہ وزارتِ داخلہ کی ناکامی ہے، اسے سوچنا چاہیے کہ اس کا سدِ باب کیسے ہو؟

خورشید شاہ نے کہا کہ ہم نے نیشنل ایکش پلان کے حوالے سے حکومت کے ساتھ مکمل تعاون کیا لیکن وزارت داخلہ نے بہت سے تنازعات کھڑے کر دیے۔

انھوں نے کہا کہ سیاست ہوتی رہے گی لیکن جو لوگ دہشت گردی کا نشانہ بن رہے ہیں وہ واپس نہیں آ سکتے۔

خورشید شاہ کا کہنا تھا ’اگر حکومت کمزور ہو تو اس سے اتنا فرق نہیں پڑتا، حکومتیں آتی جاتی رہیں گی لیکن ہمیں اس بات کا خوف ہے کہ ریاست کمزور نہ ہو کیونکہ اگر ریاست کمزور ہوگی تو ادارے کمزور ہوتے ہیں اور جب ادارے کمزور ہوں گے تو پھر اس کا نقصان عوام کو اٹھانا پڑتا ہے۔‘

قومی اسمبلی میں قائد حزبِ اختلاف نے نام لیے بغیر وزیر داخلہ کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا۔

سید خورشید شاہ نے کہا کہ کوئٹہ سانحے کے بعد وزیر اعظم اور آرمی چیف کوئٹہ آئے لیکن وزیر داخلہ نہیں آئے جس سے یہ معلوم ہوتا ہے کہ وہ خوفزدہ ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ وزیرِ داخلہ یہ سوچتے ہیں کہ لوگ مرتے رہیں ان کو کیا ہوگا؟

قائد حزب اختلاف نے کہا ’اب نواز شریف کو سوچنا چاہیے کیونکہ پھر تانے بانے وزیرِ اعظم کی طرف جاتے ہیں کیونکہ لوگ یہ پوچھ رہے ہیں کہ کل وزیر داخلہ نے جو رویہ اختیار کیا اس کے پیچھے کہیں نوازشریف تو نہیں ہیں۔‘

انھوں نے کہا ’ میاں صاحب کی آستین کے سانپ وہ انھیں ڈس رہے ہیں لیکن انھیں محسوس نہیں ہوتا، زہر چڑھتا جا رہا ہے، مجھے یہ ڈر ہے کہ ایک دن یہ زہر انھیں بھی متاثر کرے گا۔‘

اسی بارے میں