http://www.bbc.com/urdu/

اطلاع پر 25 لاکھ روپے کا انعام

حکومت نے مولانا اعظم طارق کے قاتلوں کے بارے اطلاع دینے پر پچیس لاکھ روپے کے انعام کا اعلان کیا ہے۔

انہیں پیر کے روز اسلام آباد میں اپنے چار محافظوں سمیت نامعلوم افراد نے قتل کر دیا تھا۔

پاکستان کے وفاقی وزیر داخلہ فیصل صالح حیات نے بدھ کے روز خبر رساں ادارے اے ایف پی سے گفتگو کرتے ہوئے توقع ظاہر کی کہ اس طرح قاتلوں تک پہنچنے میں مدد ملے گی۔

اے ایف پی کے مطابق فیصل حیات نے بتایا کہ واردات میں استعمال ہونے والی کار اسلام آباد کے قریب سے مل گئی ہے جس سے قاتلوں کے بارے میں چند سراغ بھی ہاتھ لگے ہیں۔

دوسری طرف ملتِ اسلامیہ کے نئے قائم مقام معاون مولانا احمد لدھیانوی نے بی بی سی اردو سروس سے بات کرتے ہوئے کہا ہے کہ انہوں نے ایف آئی آر درج کروانے کے لئے پانچ نام بھیجے ہیں جن میں مولانا ساجد نقوی، ثبتین قاضی، امان اللہ خان، منور عباس علوی اور خانۂ فرھنگ ایران کے ڈائریکٹر شامل ہیں۔

انہوں نے کہا کہ جماعت نے جمعہ کو پر امن احتجاج کی کال دی ہے اور وہ حکومت سے تعاون کر رہے ہیں۔