BBCUrdu.com
  •    تکنيکي مدد
 
پاکستان
انڈیا
آس پاس
کھیل
نیٹ سائنس
فن فنکار
ویڈیو، تصاویر
آپ کی آواز
قلم اور کالم
منظرنامہ
ریڈیو
پروگرام
فریکوئنسی
ہمارے پارٹنر
ہندی
فارسی
پشتو
عربی
بنگالی
انگریزی ۔ جنوبی ایشیا
دیگر زبانیں
 
وقتِ اشاعت: Wednesday, 18 August, 2004, 13:28 GMT 18:28 PST
 
یہ صفحہ دوست کو ای میل کیجیئے پرِنٹ کریں
القاعدہ ملزم پولیس تحویل میں ہلاک
 

 
 
القاعدہ سے تعلق سے کے الزام میں گرفتار متحدہ مجلس عمل کے رہنما قاری نور محمد پولیس کی حراست میں ہلاک ہو گئے ہیں۔

قاری نور محمد اور دو اور ایم ایم اے کے کارکنوں کو جمعرات کی رات کو القاعدہ سے تعلق کے الزام گیا تھا۔

مجلس عمل کے فیصل آباد کے ضلعی امیر نے بی بی سی کو بتایا کہ آج ان کو شام پانچ بجے کے قریب یہ معلوم ہوا کہ قاری نور محمد کی لاش ضلعی ہسپتال لائی گئی ہے جہاں ان کا پوسٹ مارٹم کیا جا رہا ہے ۔

اطلاعات کے مطابق قاری نور محمد کی ہلاکت ہو گئی ہے تاہم سرکاری ذرائع اس بارے کچھ نہیں کہہ رہے ہیں۔

قاری نور محمد جمیعت علمائے اسلام (فضل الرحمن گروپ) اور ایم ایم اے فیصل آباد کے سرکردہ رہنما تھے۔

ان کو جعمرات کی شب حراست میں لیا گیا تھا تاہم اس کی سرکاری طور پر وضاحت نہیں کی گئی تھی۔

مجلس عمل کے فیصل آباد کے ضلعی امیر کا کہنا ہے کہ لاش ابھی پولیس کی تحویل میں ہے اور ان کے ورثا کو نہیں دی گئی۔

ان کا کہنا ہے کہ فیصل آباد کی پولیس نے قاری نور محمد کو جعمرات اور جعمہ کو حراست میں لیا تھا اور ان پر دہشت گردی کا الزام لگایا تھا۔

 
 
تازہ ترین خبریں
 
 
یہ صفحہ دوست کو ای میل کیجیئے پرِنٹ کریں
 

واپس اوپر
Copyright BBC
نیٹ سائنس کھیل آس پاس انڈیاپاکستان صفحہِ اول
 
منظرنامہ قلم اور کالم آپ کی آواز ویڈیو، تصاویر
 
BBC Languages >> | BBC World Service >> | BBC Weather >> | BBC Sport >> | BBC News >>  
پرائیویسی ہمارے بارے میں ہمیں لکھیئے تکنیکی مدد