BBCUrdu.com
  •    تکنيکي مدد
 
پاکستان
انڈیا
آس پاس
کھیل
نیٹ سائنس
فن فنکار
ویڈیو، تصاویر
آپ کی آواز
قلم اور کالم
منظرنامہ
ریڈیو
پروگرام
فریکوئنسی
ہمارے پارٹنر
آر ایس ایس کیا ہے
آر ایس ایس کیا ہے
ہندی
فارسی
پشتو
عربی
بنگالی
انگریزی ۔ جنوبی ایشیا
دیگر زبانیں
 
وقتِ اشاعت: Saturday, 06 January, 2007, 02:43 GMT 07:43 PST
 
یہ صفحہ دوست کو ای میل کیجیئے پرِنٹ کریں
قیادت سے علیحدگی کا فیصلہ واپس
 
ایم کیو ایم ریلی
ایم کیو ایم کے ذمہ داران نے الطاف حسین سے اپنی غلطیوں کی معافی مانگی
متحدہ قومی موومنٹ کے خود ساختہ جلا وطن رہنماء الطاف حسین نے قیادت سے دستبرداری کا فیصلہ واپس لے لیا ہے۔

ایم کیو ایم کے لندن میں قائم انٹرنیشنل سیکریٹریٹ سے جاری ہونے والے ایک پریس ریلیز کے مطابق الطاف حسین نے کارکنوں اور ذمہ داران کے اصرار پر تحریک کی قیادت جاری رکھنے کا اعلان کیا ہے۔

الطاف حسین نے جمعہ کو یہ بیان دے کر سب کو چونکا دیا تھا کہ ان کی صحت اب انہیں تحریک کی مزید قیادت کرنے کی اجازت نہیں دیتی اور ساتھ ہی انہوں نے نام لیے بغیر ایم کیو ایم کے کچھ رہنماؤں کے سیاسی طرز عمل پر تنقید کی تھی۔

پریس ریلیز کے مطابق الطاف حسین کی طرف سے قیادت سے دستبرداری کا اعلان سن کر ایم کیو ایم کے رہنماء اور کارکن بڑی تعداد میں (کراچی کے علاقے عزیز آباد میں واقع) اپنے مرکزی دفتر ’نائن زیرو‘ پہنچ گئے۔

قیادت سے دستبرداری کا فیصلہ واپس لیتے ہوئے الطاف حسین نے ’نائن زیرو‘ میں آئے ہوئے لوگوں سے خطاب کے دوران کہا کہ بعض ذمہ داران یہ بات بھول گئے ہیں کہ ان کو جو مقام ملا ہے وہ تحریک کی وجہ سے ہے اور ان کا طرز عمل نظریاتی کی بجائے جاگیردارانہ ہوتا جا رہا ہے۔

جاگیردارانہ رویہ
 بعض ذمہ داران یہ بات بھول گئے ہیں کہ ان کو جو مقام ملا ہے وہ تحریک کی وجہ سے ہے اور ان کا طرز عمل نظریاتی کی بجائے جاگیردارانہ ہوتا جا رہا ہے
 
الطاف حسین

ان کا کہنا تھا ’ کارکنوں کو ہاری، مزارعہ یا غلام سمجھنا ان کی تعلیمات کے خلاف ہے‘۔ انہوں نے کہا کہ اگر ذمہ داران اپنے طرز عمل کو درست نہیں کرتے تو ان کے پاس سوائے اس کے کوئی چارہ نہیں کہ یا تو وہ قیادت چھوڑ دیں یا پھر اپنی زندگی کو خطرے میں ڈالتے ہوئے پاکستان آ جائیں۔

پریس ریلیز کے مطابق اس موقع پر ذمہ داران اور کارکنان جذباتی ہوگئے اور انہوں نے ایک آواز ہو کر کہا ’ہم اپنی اصلاح کرینگے، آپ کسی بھی قیمت پر واپس نہ آئیں، ہم آپ کی زندگی کا خطرہ مول نہیں لے سکتے‘۔

پریس ریلیز میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ ایم کیو ایم کی رابطہ کمیٹی اور تنظیمی کمیٹی کے تمام ارکان نے فرداً فرداً الطاف حسین سے بات کر کے اپنی غلطیوں کی معافی بھی مانگی۔

 
 
اسی بارے میں
مسرت کی جماعت متحدہ میں ضم
08 December, 2006 | پاکستان
حکمراں اتحادمیں شدید اختلاف
06 December, 2006 | پاکستان
بحران ٹلا ہے ختم نہیں ہوا
03 August, 2006 | پاکستان
تازہ ترین خبریں
 
 
یہ صفحہ دوست کو ای میل کیجیئے پرِنٹ کریں
 

واپس اوپر
Copyright BBC
نیٹ سائنس کھیل آس پاس انڈیاپاکستان صفحہِ اول
 
منظرنامہ قلم اور کالم آپ کی آواز ویڈیو، تصاویر
 
BBC Languages >> | BBC World Service >> | BBC Weather >> | BBC Sport >> | BBC News >>  
پرائیویسی ہمارے بارے میں ہمیں لکھیئے تکنیکی مدد