BBCUrdu.com
  •    تکنيکي مدد
 
پاکستان
انڈیا
آس پاس
کھیل
نیٹ سائنس
فن فنکار
ویڈیو، تصاویر
آپ کی آواز
قلم اور کالم
منظرنامہ
ریڈیو
پروگرام
فریکوئنسی
ہمارے پارٹنر
آر ایس ایس کیا ہے
آر ایس ایس کیا ہے
ہندی
فارسی
پشتو
عربی
بنگالی
انگریزی ۔ جنوبی ایشیا
دیگر زبانیں
 
وقتِ اشاعت:
 
یہ صفحہ دوست کو ای میل کیجیئے   پرِنٹ کریں
وزیرستان کے طالبان گروپوں کا اتحاد
 

 
 
ملا نذیر
ملا نذیر نے اتحاد بننے کی تصدیق کی ہے
پاکستان کے قبائلی علاقے وزیرستان میں مقامی طالبان کے تین بڑے بڑے گروپ آپس کے اختلافات کو دور کر کے ایک اتحاد میں شامل ہوگئے ہیں۔جن میں تحریک طالبان پاکستان بیت اللہ محسود گروپ، حافظ گل بہادر گروپ اور ملا نذیر گروپ کے مقامی طالبان شامل ہیں۔

ملا نذیر گروپ کے امیر ملا نذیر نے ایک نامعلوم مقام سے ٹیلفون پر بی بی سی کو بتایا کہ جمعہ کو تینوں گروپ کا ایک اجلاس وزیرستان کے ایک دور دارز علاقے میں ہوا۔جس میں تینوں گروپوں کے سربراہان بیت اللہ محسود، حافظ گل بہادر اور ملا نذیر نے شرکت کی۔ انہوں نے کہا کہ اجلاس میں فیصلہ کیاگیا کہ وہ آئندہ کے لیے کسی بھی چھوٹے تنازعہ کو ایشو نہیں بنائینگے اور مخالف قوتوں کو یہ موقع نہیں دینگے جس کی وجہ سے طالبان تقسیم ہوجائیں۔

بیت اللہ محسود
بیت اللہ محسود گروپ کو وزیرستان میں طالبان کا ایک بڑا گروپ سمجھا جاتا ہے

انہوں نے کہا کہ امریکہ کے نو منتخب صدر باراک ابامہ اور پاکستان کے صدر آصف علی زرداری کے ’اتحاد سے ایسا معلوم ہوتا ہے کہ ان دونوں کی نیت طالبان کے لیے اچھی نہیں ہے۔‘ ان کا کہنا تھا کہ ایک غیر مسلم صدر کا آصف علی زرداری سے اتحاد ہوسکتا ہے۔ تو طالبان کا کیوں نہیں ہوسکتا ہے۔جب کہ وہ سارے مسلمان بھی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اجلاس میں فیصلہ کیاگیا ہے۔کہ ان تینوں گروپوں کے کسی بھی ٹھکانے پر حملہ ہرگروپ پر حملہ تصور ہوگا۔ اور اس کا جواب بھرپور انداز میں دیا جائےگا۔

طالبان
طالبان کو مقامی آبادی کی کافی حمایت حاصل ہے

ملا نذیر نے بتایا کہ تینوں گروپوں پر مشتمل ایک تیرہ رکنی شوریٰ بھی بنائی گئی ہے جو حالات کے مطابق اتحادی تنظیموں کے لیے کسی اقدام کا فیصلہ کریگا۔ انہوں نے کہا کہ شوریٰ کے امیر کا انتخاب اجلاس کے دوران تیرہ رکنی شوریٰ سے کیا جائےگا۔ اور وہ مستقل امیر نہیں ہوں گے۔ ملا نذیر کے مطابق شوریٰ میں بیت اللہ محسود، حافظ گل بہادر اور ملا نذیر بھی شامل ہیں۔

یادرہے کہ گزشتہ کچھ عرصے سے بیت اللہ محسود اور گل بہادر اور ملانذیر کے درمیان کچھ اختلافات سامنے آئے تھے۔جس کی وجہ سے علاقے میں کشیدگی پائی جاتی تھی۔

 
 
اسی بارے میں
حکومت کو طالبان کی دھمکی
11 January, 2009 | پاکستان
طالبان کی اسرائیل کو دھمکی
17 January, 2009 | پاکستان
بیت اللہ محسود کے بھائی قتل
26 October, 2008 | پاکستان
بیت اللہ کی صحت کا معمہ
29 September, 2008 | پاکستان
تازہ ترین خبریں
 
 
یہ صفحہ دوست کو ای میل کیجیئے   پرِنٹ کریں
 

واپس اوپر
Copyright BBC
نیٹ سائنس کھیل آس پاس انڈیاپاکستان صفحہِ اول
 
منظرنامہ قلم اور کالم آپ کی آواز ویڈیو، تصاویر
 
BBC Languages >> | BBC World Service >> | BBC Weather >> | BBC Sport >> | BBC News >>  
پرائیویسی ہمارے بارے میں ہمیں لکھیئے تکنیکی مدد