اترپردیش میں عید میلادالنبی اور جمعۃ الوداع سمیت 15 چھٹیاں ختم

یوگی آدتیہ ناتھ

،تصویر کا ذریعہEPA

،تصویر کا کیپشن

اتر پردیش کے وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ نے رواں ماہ بابا صاحب بھیم راؤ امبیدکر کی یوم پیدائش پر تعطیلات ختم کرنے کا عندیہ ظاہر کیا تھا

انڈیا کی ریاست اترپردیش میں بی جے پی حکومت نے جمعۃ الوداع اور عید میلادالنبی سمیت 15 عام تعطیلات کو ختم کرنے کا اعلان کیا ہے۔

یہ بات وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ کے دفتر کی جانب سے کی جانے والی ٹویٹس میں سامنے آئی ہے۔

ایک ٹویٹ کے مطابق حکومت کا یہ فیصلہ رواں سال2017 سے ہی نافذالعمل ہوگا۔

منسوخ کی جانے والی عام تعطیلات میں جمعۃ الوداع، عید میلادالنبی اور مہارشی بالمیکی جینتی جیسی اہم تعطیلات بھی شامل ہیں۔

اس کے علاوہ خواجہ معین الدین چشتی، چندر شیکھر، پرشورام، سردار ولبھ بھائی پٹیل اور چودھری چرن سنگھ کی یوم پیدائش پر ہونے والی تعطیلات کو بھی ختم کیا جا رہا ہے۔

وزیر اعلیٰ کے دفتر کی جانب سے کیے جانے والے ٹویٹس میں کہا گیا: 'عظیم شخصیتوں کے یوم پیدائش کے موقع پر ریاست کے تمام تعلیمی اداروں میں ان کی شخصیت، كارناموں اور تحریک دینے والی تعلیمات کو موجودہ نوجوان نسل تک پہنچانے کے مقصد سے کم از کم ایک گھنٹے کی نشست منعقد کی جائے گی۔'

،تصویر کا ذریعہTwitter

،تصویر کا کیپشن

گذشتہ رات چھ ٹویٹس کے ذریعے وزیراعلی کے دفتر سے تعطیلات کے متعلق احکامات جاری کیے گئے

خیال رہے کہ حال ہی میں انڈین آئین کے معمار بابا صاحب بھیم راؤ امبیڈکر کی یوم پیدائش کے پروگرام میں وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ نے اس قسم کی عام تعطیلات کو ختم کرنے کے اشارے دیے تھے۔

آدتیہ ناتھ نے پوچھا تھا: 'اگر اس کا مقصد ان عظیم شخصیتوں کو یاد کرنا اور لوگوں کو تحریک دینا ہے تو پھر ایسے موقعوں پر کیوں نہ سکولوں کو کھولا جائے اور بچوں کو دو گھنٹے ان عظیم لوگوں کے بارے میں بتایا جائے؟'

جن تعطیلات کو یوگی آدتیہ ناتھ حکومت نے رد کیا ہے ان میں سے زیادہ تر تعطیلات کو سابقہ اکھلیش یادو حکومت نے متعارف کرایا تھا۔

اس وقت اتر پردیش میں 42 سرکاری چھٹیاں ہیں جن میں سے 17 عظیم شخصیتوں کے اعزاز میں ہوتی ہیں۔