اچھی فصل کو نظرِ بد سے بچانے کے لیے سنی لیونی

تصویر کے کاپی رائٹ SUNNYLEONE/fACEBOOK
Image caption سنی لیونی

اپنے کھیت میں اداکارہ سنی لیونی کا پوسٹر لگانے والا ایک کاشتکار آج کل خبروں میں ہے جس کا نام ہے چینچو ریڈی۔ ریاست آندھر پردیش کے ایک گاؤں میں رہنے والے ریڈی کا کہنا ہے کہ انہوں نے سنی کا یہ پوسٹر اپنی شاندار فصل کو بری نظر سے بچانے کے لیے لگایا ہے۔ان کے پاس دس ایکڑ زمین ہے جس پر وہ بینگن ، گوبی، مرچ اور بھنڈی جیسی سبزیوں کی کاشت کرتے ہیں۔

سنی لیونی کا کنڈوم کا اشتہار واپس

سنی لیونی کی کار ’پیار کے سمندر میں‘

سنی کا آئٹم نمبر اور ننھے تیمور پر تنازع

Image caption ریڈی کا خیال ہے کہ لوگوں کی توجہ اب انکی فصل کے بجائے سنی کے پوسٹر پر ہے

ان کا کہنا ہے کہ اس سال فصل بہت اچھی ہوئی ہے اور وہاں سے گزرنے والے تمام لوگ ان کی فصل کو دیکھ رہے ہیں انہوں نے لوگوں کی توجہ اپنی فصل سے ہٹانے کے لیے سنی کا پوسٹر لگایا ہے تاکہ لوگ ان کی فصل کے بجائے سنی کو دیکھیں۔

بی بی سی سے بات کرتے ہوئے ریڈی نے کہا کہ ان کا یہ فارمولہ کام کر رہا ہے اور لوگوں کی بری نظر اب ان کی فصل سے ہٹ گئی ہے۔

جنوبی بھارت میں یہ عقیدہ عام ہے کہ گھر کے باہر کوئی ڈراؤنی مورتی یا نظر بٹو لگانے سے 'بری نظر 'نہیں لگتی اور بہت سے لوگوں کا خیال ہے کہ'بری نظر' لگنے سے فصل خراب ہو جاتی ہے۔

ریڈی کا کہنا ہے کہ انہوں نے اس میں تھوڑی تبدیلی کی اور سنی کی خوبصورت تصویر لگا دی اور یہ طریقہ کام کر رہا ہے۔

اس طرح کے عقائد کی تنقید کرتے ہوئے ایک اور کسان گوگی نینی بابو کا کہنا ہے کہ اس سب بے بنیاد ہے کسی کی نظر سے فصل کیسے خراب ہو سکتی ہے ان کا کہنا ہے کہ یہ سب اندھے عقائد کو بڑھاوا دینے کے مترادف ہے۔

ان کا کہنا ہے کہ اس پوسٹر کی وجہ سے کھیتوں میں کام کرنے والی خواتین مزدور بھی پریشان ہوں گی۔

متعلقہ عنوانات