انڈیا کے زیرِ انتظام کشمیر کی خصوصی حیثیت کا خاتمہ

ملٹی میڈیا

فیچر اور تجزیے

’کیا دعا کو بھی عسکری اجازت درکار ہے؟‘

کالم نگار وسعت اللہ خان دنیا کی معروضی صورتحال کے تناظر میں بی بی سی اردو کے قارئین کے لیے فلسطینی شعراء کی مزاحمت سے پُر نظموں سے انتخاب کے ساتھ۔

پاکستان، کشمیر اور خام خیالی

’مسلم اُمّہ کے محافظوں کے اپنے مفادات ہیں۔‘ جناب وزیر خارجہ صاحب، یہ بتانے سے پہلے اتنا تو بتایا ہوتا کہ ہمارے اپنے مفادات کیا ہیں: عاصمہ شیرازی کا کالم۔

کشمیر مانگو گے۔۔۔

جب تک ہمیں کشمیر والی شہ رگ کا مطلب سمجھ آتا ہے ہم ایک اور نعرہ سیکھ لیتے ہیں۔ دودھ مانگو گے، کھیر دیں گے، کشمیر مانگو گے، چیر دیں گے مگر یہاں کسی نے کچھ نہیں مانگا، چیر کر کشمیر لے لیا ہے: محمد حنیف کا کالم

مودی کا خطاب کس کے لیے تھا؟

انڈین وزیر اعظم نریندر مودی نے اپنی 35 منٹ طویل تقریر میں یہ تاثر دینے کی کوشش کی کہ انڈیا کے زیر انتظام کشمیر سے متعلق آرٹیکل 370 کا خاتمہ انڈیا کا اندرونی معاملہ ہے جس پر کسی ملک کو پریشان نہیں ہونا چاہیے۔

انڈین سول سوسائٹی ایس او ایس!

مودی سرکار نے مسلمانوں اور دلتوں پہ زندگی پہلے ہی تنگ کر رکھی تھی اب کشمیر کا محاذ چھیڑ کر ثابت کر دیا کہ وہ صرف سیاستدان ہیں، انسان نہیں۔ پڑھیے آمنہ مفتی کا کالم۔

ملٹی میڈیا