آبدوز میں آتشزدگی، بھارتی بحریہ کے سربراہ مستعفی

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption ایڈمرل جوشی نے حادثات کی اخلاقی ذمہ داری لیتے ہوئے استعفیٰ دیا: حکام

بھارت کے شہر ممبئی میں ایک آبدوز میں آتشزدگی سے دو اہلکاروں کی ہلاکت کے بعد بحریہ کے سربراہ ایڈمرل ڈی کے جوشی نے استعفی دے دیا ہے۔

وزارت دفاع نے ایڈمرل جوشی کا استعفی منظور کر لیا ہے اور کہا ہے کہ نئے سربراہ کی تقرری تک وائس ایڈمرل رابن دھون قائم مقام سربراہ ہوں گے۔

بھارتی حکومت کی طرف سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ ڈی کے جوشی نے گزشتہ کچھ مہینوں میں پیش آنے والے حادثوں کی اخلاقی ذمہ داری لیتے ہوئے اپنے عہدے سے استعفی دیا ہے۔

آبدوز میں آتشزدگی کا واقعہ اتوار کو اس وقت پیش آیا تھا جب آئی این ایس سندھو رتنا نامی آبدوز کے سمندر میں ٹیسٹ کیے جا رہے تھے۔

بھارتی حکام کے مطابق اچانک اس کے آٹومیٹک ہیچز سے دھواں نکلنا شروع ہو گیا۔دھویں کے نتیجے میں بھارتی بحریہ کے دو ملاح لاپتہ جب کہ سات بے ہوش ہوگئے تھے۔

یہ گذشتہ چند ماہ میں بھارتی بحریہ کے جنگی جہازوں اور آبدوزوں کو پیش آنے والے حادثات کے سلسلے کی ایک کڑی ہے۔

واضح رہے کہ گذشتہ سال ممبئی میں ایک بھارتی آبدوز میں دو دھماکوں اور اس کے نتیجے میں لگنے والی آگ کے بعد آبدوز ڈوبنے سے 18 ملاح ہلاک ہو گئے تھے۔

ابتدائی تفتیش کے مطابق آئی این ایس سندھو رکھشک نامی آبدوز پر موجود ہتھیاروں نے اس کے ڈوبنے میں اہم کردار ادا کیا تھا۔ یہ حادثہ گذشتہ کئی برسوں میں بھارتی کے بدترین حادثات میں سے ایک تھا۔

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption گذشتہ سال ممبئی میں ایک بھارتی آبدوز میں دو دھماکوں اور اس کے نتیجے میں لگنے والی آگ کے بعد آبدوز ڈوبنے سے 18 ملاح ہلاک ہو گئے تھے

بھارتی آبدوز کے اس تازہ حادثے میں ابتدائی تفتیش کے مطابق آئی این ایس سندھو رتنا پر کسی قسم کا گولہ بارود نہیں تھا۔

آبدوز ممبئی کے ساحل پر معمول کی تربیت پر تھی کہ اس میں سے دھواں نکلنا شروع ہو گیا۔ بھارتی بحریہ کے ترجمان کمانڈر راہل سنہا نے این ڈی ٹی وی نیوز چینل کو بتایا کہ ایسے واقعات کو کم کرنے کے اقدامات کیے جا رہے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ ڈاکٹروں کی ایک ٹیم بے ہوش ہونے والے ملاحوں کا علاج کر رہی ہے۔

کمانڈر راہل سنہا کے مطابق آبدوز آئی این ایس سندھو رتنا کی مدد کے لیے اس کے ارد گرد نیوی کے جہاز تعینات کر دیے گئے ہیں۔ روسی ساختہ آئی این ایس کلو کلاس کو حال ہی میں مرمت کیا گیا تھا۔

ابتدائی تفیش کے مطابق آئی این ایس سندھو رتنا آبدوز کو زیادہ نقصان نہیں پہنچا اور اسے بندرگاہ واپس بھیجا جا رہا ہے۔

خبر رساں ادارے پریس ٹرسٹ آف انڈیا کے مطابق ایک سینئیر افسر کی نگرانی میں حادثے کی تحقیقات کا حکم دے دیا گیا ہے۔

اطلاعات کے مطابق گذشتہ ماہ آئی این ایس سندھوگوش نامی ایک اور آبدوز ممبئی کی بندرگاہ آتے ہوئے حادثے کا شکار ہو گئی تھی۔

اس کے علاوہ فروری سنہ 2010 میں سندھو رکھشک ہی کی بیٹری میں آگ لگ گئی تھی جس سے ایک بحری فوجی ہلاک ہو گیا تھا۔

اسی بارے میں