بھارت: مدھیہ پردیش میں کشتی غرقاب، چھ بچے ہلاک

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption بھارت میں کشتی پلٹنے کے واقعات عام ہیں

بھارت کی وسطی ریاست مدھیہ پردیش کے دتيا اور گوالیار اضلاع کی سرحد پر سندھ ندی میں ایک کشتی کے ڈوب جانے سے چھ بچوں ہلاک ہو گئے ہیں جبکہ چار افراد کی حالت نازک بتائي جا رہی ہے۔

اطلاعات کے مطابق یہ حادثہ اتوار کو رات گئے پیش آیا اور اس میں مزید اموات کے خدشات ظاہر کیے جا رہے ہیں۔

دتيا پولیس کنٹرول روم کے انچارج ایم کے دویدی نے بی بی سی کو بتایا کہ اس کشتی میں مانجھي برادری کے لوگ سوار تھے۔

انہوں نے بتایا کہ دریا میں بہہ جانے والے افراد کی تلاش کا کام جاری ہے۔

دویدی کے مطابق دریا سے ابھی تک چھ بچوں کی لاشیں برآمد کر لی گئی ہیں جبکہ پولیس کے مطابق حادثے کا شکار اس کشتی پر تقریباً 25 افراد سوار تھے۔

پولیس افسر نے بتایا کہ دریا میں بہہ جانے والے لوگوں کی تلاش کے لیے امدادی عملہ جائے وقوع پر موجود ہے۔

انھوں نے بتایا کہ یہ لوگ رات گئے اپنے رشتہ داروں کے گھروں سے واپس آ رہے تھے۔

اس علاقے کے تھانہ انچارج وی ساتنكر کے مطابق: ’کشتی بہت پرانی تھی اور اس میں حد سے زیادہ لوگ سوار ہو گئے تھے جس کے سبب اس میں پانی بھرنے لگا۔ اس کے بعد کشتی ڈگمگاكر پلٹ گئی۔ حادثے کے بعد کچھ لوگ دریا تیركر باہر بھی آئے۔ لاپتہ لوگوں کی تلاش جاری ہے۔‘

مقامی صحافی ایس نیازی کے مطابق حادثے کے بعد 18 افراد لاپتہ بتائے جا رہے ہیں جس کی تلاش جاری ہے۔

اسی بارے میں