پھولن دیوی کے قاتل کو عمر قید کی سزا

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption پھولن دیوی پر مشہور فلم بینڈٹ کوئن بنی تھی

بھارت کی ایک عدالت نے مشہور ڈاکو اور بعد میں سیاستدان بننے والی پھولن دیوی کو قتل کرنے کے الزام میں ایک شخص کو عمر قید کی سزا سنائی ہے۔

سنہ 2001 میں پھولن دیوی کو ان کے گھر کے باہر فائرنگ کر کے ہلاک کر دیا گیا تھا۔

دہلی کی ایک عدالت نے گذشتہ ہفتے شیر سنگھ رانا کو پھولن دیوی کے قتل اور اقدام قتل کے الزام میں قصوروار ٹھہرایا تھا۔

شیر سنگھ رانا نے عدالت سے نرمی برتنے کی درخواست کرتے ہوئے کہا تھا کہ ان پر عمر رسیدہ والدہ کی دیکھ بھال کی ذمہ داری ہے۔

پھولن دیوی نے جرائم کا راستہ چھوڑ کر سیاست میں حصہ لیا اور وہ 38 سال کی عمر میں بھارت کی سب سے زیادہ مشہور سیاست دان بن گئیں۔

نچلی ذات سے تعلق رکھنے والی پھولن دیوی کو اس وقت پورا بھارت جاننے لگا جب سنہ 1981 میں انھوں نے اپنے ساتھ ہونے والی اجتماعی جنسی زیادتی کا بدلہ لینے کے لیے ویلنٹائن ڈے پر اونچی ذات کے 22 افراد کو مبینہ طور پر قتل کردیا۔

انھوں نے خود کو سنہ 1983 میں حکام کے حوالے کر دیا اور وہ فروری سنہ 1994 تک جیل میں رہیں۔

اس کے دو سال بعد وہ پارلیمان کے ایوان زیریں کی رکن بن گئیں تھیں۔پھولن دیوی پر مشہور فلم بینڈٹ کوئن بنی تھی۔

اسی بارے میں