پٹاخوں کی دکان میں آتشزدگی سے سات افراد ہلاک

Image caption گذشتہ ہفتے ریاست آندھرا پردیش میں پٹاخے تیار کرنے والی فیکٹری میں دھماکے کے نتیجے میں 17 افراد ہلاک ہو گئے تھے

بھارت کی ریاست راجستھان کے ضلع باڑ میر میں حکام کے مطابق پٹاخوں کی دکان میں آتشزدگی سے کم از کم سات افراد ہلاک ہو گئے ہیں۔

ضلع باڑمیر کے پولیس سپرنٹنڈنٹ ہیمنت شرما نے بی بی سی کو بتایا کہ ’باڑ میر ضلع کے بالوترا قصبے میں آگ سے سات افراد ہلاک ہوئے جن میں پانچ ایک ہی خاندان کے ہیں۔‘

ہندو برادری کے مذہبی تہوار دیوالی کے موقعے پر لائسنس یافتہ تھوک کی ایک دکان میں پٹاخے فروخت کرنے کے لیے رکھے گئے تھے۔

پولیس حکام کا کہنا ہے کہ جمعرات کی صبح آتشزدگی کا واقعہ اس وقت پیش آیا جب دکان بند تھی۔

پولیس کے مطابق آگ کے وقت دکان کے شٹر بند تھے اور ابتدائی تحقیقات کے مطابق ہلاک ہونے والے افراد دکان کے اندر سو رہے تھے۔

آگ کی اطلاع ملتے ہی فائر بریگیڈ کا عملہ جائے حادثہ پر پہنچا تو اس وقت تک آگ پھیل چکی تھی اور اس میں پھنسے لوگوں کی جان نہیں بچائی جا سکی۔

آگ کے نتیجے میں قریب میں کھڑکی گاڑیوں کو بھی نقصان پہنچا ہے جبکہ آگ پر چند گھنٹوں کی کوششوں کے بعد مکمل طور پر قابو پانے میں کامیابی ملی۔ گذشتہ ہفتے ریاست آندھرا پردیش میں پٹاخے تیار کرنے والی فیکٹری میں دھماکے کے نتیجے میں 17 افراد ہلاک ہو گئے تھے۔

دیوالی کے تہوار کے موقع پر چراغاں کیا جاتا ہے اور بڑے پیمانے پر آتش بازی ہوتی ہے جس کے سبب ملک بھر میں پٹاخوں کی دستیابی اہم ہو جاتی ہے۔

اسی بارے میں