’سچ مچ چیونگ گم، وہ بھی رسمی پریڈ کے دوران؟‘

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption میڈیا رپورٹوں میں کہا گیا ہے کہ اوباما نیکوٹین چیونگ گم چبا رہے تھے کیونکہ وہ سگریٹ پینے کی عادت چھوڑنے کی کوشش کر رہے ہیں

بھارت میں یوم جمہوریہ پریڈ کے دوران امریکی صدر براک اوباما کے چیونگ گم چبانے کے حوالے سے ٹويٹر پر کافی تبصرے ہو رہے ہیں۔

یوم جمہوریہ پریڈ کے مہمان خصوصی اوباما چیونگ گم کو منہ سے نکالتے اور پھر منہ میں رکھتے ہوئے کیمرے میں آ گئے تھے۔

ٹیلی ویژن پر یہ منظر دیکھ رہے بہت سے بھارتی فوری طور ٹوئٹر پر مذاق اڑانے لگے۔

میڈیا رپورٹوں میں کہا گیا ہے کہ اوباما نیکوٹین چیونگ گم چبا رہے تھے کیونکہ وہ سگریٹ پینے کی عادت چھوڑنے کی کوشش کر رہے ہیں۔

مصنفہ شوبھا ڈے نے ٹویٹ کیا ’براک بھائی اپنے جبڑوں سے زیادہ کام لے رہے ہیں اور چیونگ گم چبا رہے ہیں! کم سے کم یہ گٹکا تو نہیں ہے لیکن سچ مچ چیونگ گم، وہ بھی ایک رسمی پریڈ کے دوران؟‘

صارف اجتھ نے ٹویٹ کیا ’براک اوباما چیونگ گم چبا رہے ہیں۔ امید ہے کہ وہ اسے تھوك كر صاف ہندوستان مہم کو خطرے میں نہیں ڈالیں گے۔‘

زیادہ تر صارفین نے جہاں تنقید کی وہیں کچھ نے اس پر مزاحیہ تبصرہ بھی کیا۔

صارف را بيذ نے ٹویٹ کیا ’خبریں ہیں کہ ایئر فورس ون میں 100 کلو چیونگ گم لائی گئی تھی اور اوباما نے ان میں سے آدھی تین گھنٹے کے یوم جمہوریہ کی تقریبات کے دوران کھا لیں۔‘

ایک اور صارف رامكی نے لکھا ’پریڈ کے دوران اوباما کتنی چیونگ گم چبائیں گے؟ اس سے بھی اہم سوال یہ ہے کہ وہ اسے ٹھکانے کہاں لگا رہے ہیں؟‘

دیوپرا مترا نے پوسٹ کی ’اے اے۔ جب مودی بول رہے تھے تو اوباما نے اپنے منہ سے چیونگ گم نکال لی اور جب بات چیت ختم ہو گئی تو اسے واپس منہ میں رکھ لیا۔‘

ریکھا جھا نے ٹویٹ کیا ’یہ دیکھنا مضحکہ خیز ہے کہ وہ لوگ جو ہندوستانی لیڈروں کے انتہائی خراب اور شرمناک جرائم کو معاف کر دیتے ہیں، وہ اوباما کے چیونگ گم چبانے پر تنقید کر رہے ہیں۔‘

بیڈ ڈاکٹر کے نام کے صارف نے کہا ’اوباما صرف چبا ہی تو رہے تھے، ہم ہندوستانیوں کی طرح تھوک تو نہیں رہے تھے۔‘

اسی بارے میں