چینی ریلوے سٹیشن پر چاقوؤں کے وار سے نو افراد زخمی

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption چین کی پولیس نے اس سے قبل ہونے والے دو حملوں کی ذمہ داری وہاں بسنے والے شدت پسند مسلم اقلیتی گروہ پر ڈالی تھی

چین میں پولیس حکام کے مطابق ملک کے شمال میں واقع شہر گوانگ زو میں دو حملہ آوروں نے چاقو کے وار کر کے نو افراد کو زخمی کر دیا ہے۔

پولیس کے مطابق یہ واقعہ جمعے کی صبح شہر کے ریلوے سٹیشن پر پیش آیا ہے۔

پولیس کی جانب سے ایک بیان میں بتایا گیا ہے کہ پولیس کی کارروائی میں ایک مشتبہ حملہ آور ہلاک ہوگیا جبکہ ایک کو زندہ گرفتار کر لیا گیا ہے۔

تاہم واقعے کی ممکنہ وجوہات کے بارے میں کسی قسم کی معلومات فراہم نہیں کی گئیں۔

یہ چین میں کسی ریلوے سٹیشن پر لوگوں کو نشانہ بنائے جانے کا پہلا واقعہ نہیں۔

گذشتہ سال مارچ میں ہی جنوب مغربی علاقے کُنمنگ میں پانچ مسلح حملہ آوروں نے ایک ٹرین سٹیشن پر کم از کم 28 افراد کو چاقو مار کر ہلاک کر دیا تھا۔

اس کے علاوہ ایک حملہ ارومچی میں کیا گیا تھا۔ حکام نے دونوں واقعات کی ذمہ داری ’اویغور‘ نسل کے مسلم شدت پسندوں پر ڈالی تھی۔

ستمبر 2014 میں جنوبی چین کے پگشان قصبے میں سکول جانے والے بچوں پر حملہ کیا گیا جس میں چار طالب علم ہلاک ہوگئے تھے۔

سال 2010 میں چین میں اسی طرح کے پانچ واقعات میں 17 افراد کو ہلاک ہوئے تھے جن میں سے 15 بچے شامل تھے۔

اسی بارے میں