’چین مصنوعی جزیروں کی تعمیر کا کام مکمل کرے گا‘

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption چین کا جنوبی بحیرہ چین کے بیشتر حصے پر دعویٰ ہے

چین کی وزراتِ خارجہ کا کہنا ہے کہ بحیرہ جنوبی چین میں مصنوعی جزیروں کے منصوبوں کو جلد مکمل کر لیا جائےگا۔

امریکہ اور دیگر ممالک جن کا اس علاقے پر دعویٰ ہے کا کہنا ہے کہ چین فوجی مقاصد کے لیے یہ مصنوعی جزیرے بنا رہا ہے۔

جبکہ چینی حکام کا کہنا ہے کہ یہ جزیرے دفاع کے ساتھ تلاش اور بچاؤ اور سمندری تحقیق کے کام بھی آئیں گے۔

واضع رہے کہ چین کا جنوبی بحیرہ چین کے بیشتر حصے پر دعویٰ ہے۔

گزشتہ سال چین نے بحیرہ جنوبی چین کے متنازعہ علاقوں میں زمین کی بحالی کا م تیز کر دیا تھا جس کے بعد امریکہ نے چین سے کام مستقل بنیادیوں پر روکنے کا مطالبہ کیا تھا۔

حالیہ ہفتوں میں بحیرہ جنوبی چین میں واقع سپارٹلی کے متنازع جزائر کے قریب امریکی افواج اور چین کی بحریہ کے درمیان کشیدگی میں اضافہ ہوا ہے۔

یاد رہے کہ چین سمندر کے سات علاقوں میں زمین کی بحالی کام کر رہا ہے لیکن منگل کو جاری کیےگئے بیان میں یہ واضع نہیں کیا گیا کہ ان میں سے کون سے علاقوں میں کام جلد مکمل کر لیا جائے گا۔

چینی وزارتِ خارجہ نے اپنے بیان میں اس حوالے سے صرف یہ کہا ہے کہ ’چین بحیرہ جنوبی چین میں جاری تعمیراتی منصوبے کے تحت زمین کی بحالی کام جلد مکمل کر لے گا۔ زمین کی بحالی مکمل ہونے کے بعد متعلقہ ضروریات کو مدِ نظر رکھتے ہوئے عمارات کی تعمیر کا کام شروع کیا جائے گا۔‘

اسی بارے میں