سری لنکا کی مخلوط حکومت تحلیل، انتخابات کی تاریخ کا اعلان آج

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption سری لنکا کے قانون کے تحت اسمبلی کے تحلیل کیے جانے کے 52 سے 66 دنوں کے اندر انتخابات نے چاہئیں

سری لنکا کی حکومت کے ترجمان کا کہنا ہے کہ صدر میتھرئی پالا سریسینا نے جنرل الیکشن سے دس ماہ قبل سری لنکا کی اسمبلی کو تحلیل کردیا ہے۔

حکومت کے ترجمان راجیتھا سینارتنے کا کہنا ہے ’صدر نے اسمبلی کی تحلیل کے نوٹیفیکیشن جاری کیا ہے۔ اسمبلی جمعہ اور ہفتہ کی درمیانی شب سے تحلیل ہو گئی ہیں۔‘

یاد رہے کہ سریسینا نے جنوری میں ہونے والے صدارتی انتخابات میں مہندرا راجاپکسے کو شکست دی تھی۔

صدر نے یہ فیصلہ اس وقت کیا جب حکمراں جماعت یونائیٹڈ نیشنل پارٹی کے ترجمان نے کہا کہ اس نے صدر سے اسمبلی تحلیل کرنے کی درخواست کی ہے۔

یونائیٹڈ نیشنل پارٹی نے صدارتی انتخابات میں سریسینا کی حمایت کی تھی۔ اس جماعت کے رہنما رنیل وکریمیسنگھا ملک کے وزیر اعظم ہیں۔

سری لنکا کے قانون کے تحت اسمبلی کے تحلیل کیے جانے کے 52 سے 66 دنوں کے اندر انتخابات نے چاہئیں۔

سرکاری ذرائع نے بی بی سی کو بتایا ہے کہ عام انتخابات 17 اگست کو ہوں گے۔

سری لنکا کے الیکشن کمشنر ہفتے کو پریس کانفرنس میں انتخابات کی تاریخ کا اعلان کریں گے۔

اسمبلی کے تحلیل ہونے کے ساتھ مخلوط حکومت کا خاتمہ ہو گیا ہے جو جنوری میں صدارتی انتخابات کے بعد 100 روز کے لیے قائم کی گئی تھی۔

تاہم یہ مخلوط حکومت 100 روز سے زیادہ وجود میں رہی کیونکہ اس کو اہم آئینی اصلاحات کے لیے مزید وقت درکار تھا۔

اسی بارے میں