منی پور حملے کا منصوبہ ساز گرفتار

تصویر کے کاپی رائٹ
Image caption بھارت کے شمال مشرقی علاقے میں باغیوں کے مختلف گروہوں میں اتحاد کے بعد وہاں حملوں میں اضافہ دیکھنے میں آیا ہے

بھارت نے دعویٰ کیا ہے کہ اس نے اپنے فوجی دستوں پر ہونے والے ایک بڑے حملے کے منصوبہ ساز کو گرفتار کر لیا ہے۔

برما کی سرحد کے قریب بھارت کے شمال مشرقی ریاست منی پور میں پچھلے ماہ ہونے والے اس حملے کے نتیجے میں 20 بھارتی فوجی ہلاک ہو گئے تھے۔

بھارتی سکیورٹی ایجنسی این آئی اے کے مطابق گرفتار کیے جانے والے شخص کا نام کھملو ابی آنل ہے جو علیحدگی پسند ’نیشنل سوشلسٹ کونسل آف ناگالینڈ‘ نامی ایک تنظیم کے رہنما ہیں۔

حملے کے کچھ ہی دن بعد بھارت نے برما میں باغیوں کے مبینہ کیمپوں پر جوابی کارروائی کی، تاہم برما کے حکام نے اس بات کی تردید کی تھی۔

بھارت کے شمال مشرقی علاقے میں باغیوں کے مختلف گروہوں میں اتحاد کے بعد وہاں حملوں میں اضافہ دیکھنے میں آیا ہے۔

اس سے قبل منی پور کی ریاست کئی سال سے پر امن رہی ہے لیکن دیگر شمال مغربی ریاستوں کی طرح اسے بھی پسماندہ سمجھا جاتا ہے اور یہاں کے لوگ وفاقی حکومت کی بے پروائی کی شکایت کرتے ہیں۔

اسی بارے میں