بھارت کی پابندیاں، تیل کی درآمد پر نیپال کا چین سے معاہدہ

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption یہ پہلا موقع ہو گا کہ نیپال بھارت کے علاوہ کسی اور ملک سے تیل لے گا

نیپال نے بھارت کی جانب سے تیل کی سپلائی پر پابندی عائد کرنے کے بعد تیل کی کمی پوری کرنے کے لیے چین سے تیل اور ڈیزل درآمد کرنے کا معاہدہ کر لیا ہے۔

امریکی خبر رساں ایجنسی اے پی کے مطابق نیپال آئل کارپوریشن کے افسر دیپک برل نے جمعرات کو کہا کہ بیجنگ میں چائنا نیشنل آئل کارپوریشن سے تیل کی درآمد کی یادداشت پر دستخط ہوئے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ اس حوالے سے تفصیلات کا ابھی طے ہونا باقی ہے۔

یہ پہلا موقع ہوگا کہ نیپال بھارت کے علاوہ کسی اور ملک سے تیل لےگا۔

بھارت نے نیپال کو تیل مہیا کرنے پر پابندی اس وقت لگائی تھی جب نیپال میں مدھیشی برادری نے نئے آئین میں مزید حقوق کے لیے مظاہرے کیے۔

مدھیشیوں کا کہنا ہے کہ نیپال کے نئے آئین میں ان کے حقوق کا مناسب خیال نہیں رکھا گیا۔ اس علاقے کی مختلف سیاسی جماعتوں اور تنظیموں نے اس کے خلاف احتجاجی تحریک چلا رکھی ہے۔

بھارت کی سرحد سے متصل ان علاقوں میں رہنے والے لوگوں کا کہنا ہے کہ نیپال کے نئے آئین میں ان کے حقوق کا خیال نہیں رکھا گیا ہے۔

نیپال کے بعض رہنماؤں نے اس بات پر سخت نکتہ چینی کی ہے کہ بھارت نیپال کے اندرونی معاملات میں مداخلت کر رہا ہے اور ترائی کے علاقے میں دانستہ طور پر مظاہروں کو ہوا دے رہا ہے۔

اسی بارے میں