افضل گورو کے بیٹے غالب نے کامیابی کا پرچم لہرایا

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption افضل گورو پوسٹر کی تصویر میں اپنے بیٹے کے ساتھ اور ان کی اہلیہ تبسم گورو

بھارتی پارلیمنٹ پر حملے کی سازش کے مجرم افضل گورو کے بیٹے غالب گورو نے دسویں جماعت یعنی میٹرک کے امتحانات میں شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے۔

بھارتی خبر رساں ایجنسی پی ٹی آئی کے مطابق، غالب گورو نے جموں کشمیر بورڈ کے امتحان میں 500 میں سے 474 نمبر حاصل کیے جو کہ 94.8 فی صد بنتے ہیں۔

اتوار کی رات اعلان کیے جانے والے امتحان کے نتائج کے مطابق غالب گورو کو تمام پانچ موضوعات میں ’اے ون‘ گریڈ ملے ہیں۔

غالب کے والد افضل گورو کو بھارتی پارلیمان پر حملے کا مجرم قرار دیا گیا تھا اور اس جرم کے لیے انھیں نو فروری سنہ 2013 کو پھانسی دے دی گئی تھی۔

بھارتی پارلیمنٹ پر 13 دسمبر سنہ 2001 کو شدت پسندوں کی جانب سے حملہ کیا گیا تھا۔

سوشل میڈیا پر اس بات کی تعریف کی جا رہی ہے کہ غالب گورو نے مشکل حالات کے باوجود دل جمعی کے ساتھ تعلیم حاصل کی اور اچھے نمبر حاصل کیے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Twitter
Image caption میر واعظ عمر فاروق نے اپنے ٹویٹ میں سارے کامیاب ہونے والوں کو مبارکباد دی ہے

حریت رہنما میر واعظ عمر فاروق کے نام والے ٹوئٹر ہینڈل سے میٹرک میں کامیاب ہونے والے تمام بچوں کو مبارک باد دی گئی ہے۔

انھوں نے لکھا ہے: ’میٹرک کے امتحانات میں جنھوں نے اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے انھیں مبارک باد، بطور خاص شہید افضل گورو کے بیٹے غالب کے لیے جنھوں نے 94 فی صد نمبر حاصل کیے۔ انھیں ابھی بہت آگے جانا ہے۔‘

اسی بارے میں