بھارت: ساس کو مارنے پیٹنے پر خاتون گرفتار

اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

بھارت میں پولیس نے ایک عورت کو گرفتار کر لیا ہے جس کی اپنی ساس کو بری طرح پیٹتے ہوئے ویڈیو منظر عام پر آئی تھی۔

ویڈیوز جو جنگل کی آگ کی طرح پھیلیں

گلوکاری کے مقابلے میں شرکت کے بعد رہائی

ریاست اتر پردیش میں منگل کو سنگیتا جین کو 70 سالہ راج رانی جین پر حملہ کرنے کے شبہے میں گرفتار کر لیا گیا تھا۔

حملے کی ویڈیو فوٹیج بظاہر گذشتہ ہفتے کو سامنے آئی تھی جب سنگیتا کے شوہر نے بجنور ضلع میں قائم اپنے گھر میں ایک سی سی ٹی وی کیمرہ نصب کیا تھا تاکہ وہ اپنی بیوی کو ’رنگے ہاتھوں‘ پکڑ سکیں۔

پولیس نے کہا ہے کہ ’خاندان میں شوہر، بیوی اور ساس کے درمیان بہت لڑائی جھگڑے ہوتے تھے۔‘

تصویر کے کاپی رائٹ videograb
Image caption سنگیتت پر اپنی ساس کو قتل کرنے کا الزام عائد کیا گیا ہے

سندیپ جین کا کہنا ہے کہ ان کی بیوی ان کے اہل خانہ پر تب سے حملے کر رہی تھی جب سے ان کی شادی سات سال قبل ہوئی تھی۔

لیکن اس حملے کی وجہ اور پولیس کو اس واقعے کے بارے میں دیر سے اطلاع کرنے کی وجہ اب تک واضح نہیں کی گئی ہے۔

سنگیتت پر اپنی ساس کو قتل کرنے کا الزام عائد کیا گیا ہے۔ انھوں نے اب تک اس ویڈیو پر کوئی تبصرہ نہیں کیا ہے۔

ان تکلیف دہ مناظر کے سامنے آنے کے بعد بھارت بھر میں غم و غصہ پایا جاتا ہے۔ ویڈیو میں ایک عورت ایک عمر رسیدہ خاتون کو تھپڑ مار کر انھیں بستر میں گھسیٹتی ہوئی دکھائی دے رہی ہے۔ کچھ مناظر میں ایسے دکھائی دے رہا ہے جیسے کہ عمر رسیدہ خاتون کا گلا بھی گھونٹا جا رہا ہو۔

راج رانی جین نے جنھیں اب ہسپتال منتقل کیا گیا ہے، صحافیوں کو بتایا کہ ’میری بہو نے مجھے تھپڑ مار کر میرا گلا گھونٹنے کی کوشش کی۔ پھر اس نے کچھ پتھروں سے مجھے مارنا شروع کر دیا۔‘

ان کے بیٹے نے کہا کہ ان کی بیوی ’ہمیشہ سے ایسی تھی‘ لیکن انھوں نے اپنی بیوی کے برتاؤ کے بارے میں مزید کوئی تفصیل نہیں بتائی ہے۔

سینئر پولیس افسر دلجیت چودھری نے ٹی وی چینل این ڈی ٹی وی سے کہا ہے کہ وہ اس واقعے کی تحقیقات کر رہے ہیں۔

اسی بارے میں