دہلی: بچوں کی ہلاکت کے بعد سکولوں سے رپورٹ طلب

Image caption ہلی کے نائب وزیرِ اعلیٰ نے ایک بیان میں کہا ہے کہ ان اموات کی مکمل تحقیقات کروائی جائیں گی

بھارتی دارالحکومت دہلی میں سکول کے دو بچوں کی ہلاکت کے بعد حکام نے ہنگامی اجلاس بلایا ہے جس میں بچوں کی حفاظت کے حوالے سے جو خدشات پیدا ہوگئے ہیں ان پر غور کیا جائے گا۔

دہلی میں دو مختلف واقعات میں دو بچے سکول میں پیش آنے والے حادثوں کا شکار ہو کر اپنی جان گنوا بیٹھے تھے۔

’سکول بیگ کا وزن بچے کے وزن کا 10 فیصد ہو‘

سنیچر کو ایک نجی سکول کی پانی کی ٹینکی سے ایک چھ سالہ بچے کی لاش ملی تھی۔ بچے کے والدین کا کہنا ہے کہ ابھی یہ واضح نہیں ہے کہ ان کے بچے نے پانی کی ٹینکی تک رسائی کیس حاصل کی۔

اس سے قبل بدھ کے روز دہلی کی مقامی حکومت کے زیرِ انتظام ایک سکول میں پیش آنے والے ایک حادثے میں سکول میں موجود زہریلے مواد کی ٹینکی سے ایک پانچ برس کے بچے کی لاش ملی تھی۔

سکولوں میں ہونے والی ان اموات کے بعد والدین میں شدید اضطراب پایا جاتا ہے۔

دہلی کے نائب وزیرِ اعلیٰ نے ایک بیان میں کہا ہے کہ ان اموات کی مکمل تحقیقات کروائی جائیں گی۔

دوسری جانب دہلی کی حکومت نے دارالحکومت میں موجود تمام سکولوں سے کہا ہے کہ سکولوں کی عمارتوں کو بچوں کے لیے محفوظ بنائیں اور اس سلسلے میں جو اقدامات اٹھائے گئے ہیں ان کے متعلق جامع رپورٹ جمع کروائی جائے۔

اسی بارے میں