50 ہزار کی پینشن کے لیے اداکار اور کرکٹرز قطار میں

Image caption کروڑوں روپے کمانے والے بھارتی کرکٹ ٹیم کے آل راؤنڈر کھلاڑی سریش رائنا نے بھی اس پنشن کے لیے دارخواست دی ہے

کرکٹ کے ذریعے لاکھوں روپے کمانے والے بھارتی ٹیم کے آل راؤنڈر کھلاڑی سریش رائنا، فلمی اداکار اور رکن پارلیمان راج ببّر سمیت 100 سے زیادہ ’یش بھارتی اعزاز‘حاصل کرنے والی معروف شخصیات نے 50 ہزار روپے ماہانہ پنشن کے لیے درخواستیں دی ہیں۔

ریاست اتر پردیش کی حکومت نے یہ پنشن سکیم ان شخصیات کے لیے شروع کی تھی جنہیں ریاستی اعزاز ’یش بھارتی‘ یا پھر قومی اعزاز ’پدم‘ سے نوازا گیا ہو۔

یہ سکیم صرف ان افراد کے لیے مخصوص ہے جن کی جائے پیدائش یا کام کرنے کی جگہ ریاست اترپردیش میں ہو۔

’یش بھارتی‘ سے نوازے گئے ایسے ہی 141 لوگوں کو ریاستی حکومت کے محکمہ ثقافت کی جانب سے پنشن کے لیے درخواست کا فارم بھیجا گیا تھا کہ جنھیں اس کی ضرورت ہو وہ اسے حاصل کر سکتے ہیں۔

درخواست کی آخری تاریخ 31 جنوری تھی۔ ان میں سے 108 لوگوں نے پنشن کے لیے درخواست دی ہے۔

اداکار امیتابھ بچن، جیا بچّن اور ان کے بیٹے ابھیشیک بچّن بھی ’یش بھارتی‘ اعزاز حاصل کرنے والوں میں سے ہیں لیکن وہ اس پنشن کو لینے سے انکار کر چکے ہیں۔

پنشن طلب کرنے والے دیگر لوگوں میں اداکار راج ببّر کی اہلیہ نادرا ببّر، اداکار جمی شیر گل، نوازالدین صدیقی، کلاسیکل گلوکارہ گرجا دیوی، ڈرامہ نگار راج بساريہ، لوك گلوکارہ مالنی اوستھی، سابق کرکٹر محمد کیف وغیرہ شامل ہیں۔

Image caption پنشن طلب کرنے والے لوگوں میں اداکار نوازالدین صدیقی اور سابق کرکٹر محمد کیف وغیرہ بھی شامل ہیں

محکمہ ثقافت میں سینیئر سیکرٹری انیتا مشرام نے کہا کہ ابھی انہوں نے موصول ہونے والی درخواستیں نہیں دیکھیں اس لیے پنشن کے لیے کن کن افراد نے فارم بھرا ہے یہ بتانا ان کے لیے ابھی ممکن نہیں ہے۔

لیکن اسی محکمہ کی ایک دوسری افسر انورادھا گوئل نے اس بات کی تصدیق کی ہے کہ کرکٹر سریش رائنا سمیت 108 لوگوں نے ’یش بھارتی پنشن‘ کے لیے درخواست بھیجی ہے لیکن انھوں نے درخواست دہندگان کے فارم دکھانے سے انکار کر دی

انورادھا گوئل نے بتایا ’کچھ لوگوں کا کہنا ہے کہ یہ لوگ امیر ہیں، ان لوگوں کو پنشن کی کیا ضرورت ہے؟ لیکن اس پنشن کے لیے معاشی حالت کو بنیاد نہیں بنایا گيا ہے۔ اسے حاصل کرنے کے لیے اس شخص کا غریب ہونا ضروری نہیں ہے۔‘

گذشتہ برس شروع کی جانے والی اس پینشن سکیم کے لیے ریاستی بجٹ میں ابھی تک اس کا کوئی ذکر نہیں تھا لیکن ضمنی بجٹ کے ذریعے اس کمی کو پورا کیا جائےگا۔

اسی بارے میں