ٹرمپ کی کامیابی کے لیے انڈیا میں ہندوؤں کی پوجا

تصویر کے کاپی رائٹ EPA
Image caption دارالحکومت دہلی میں سخت گیر ہندو تنظیم ہندو سینا نے آئندہ صدارتی انتخابات میں ڈونلڈ ٹرمپ کی کامیابی کے لیے دعائیہ تقریب کا اہتمام کیا

اامریکہ میں رپبلکن پارٹی کی جانب سے صدارتی امیدواری کے خواہش مند ڈونلڈ ٹرمپ کی حمایت میں انڈیا میں بعض سخت گیر ہندو تنظیمیں سامنے آ گئی ہیں۔

اس سلسلے میں انڈیا کے دارالحکومت دہلی میں کٹر ہندو تنظیم ہندو سینا نے آئندہ صدارتی انتخابات میں ڈونلڈ ٹرمپ کی کامیابی کے لیے دعائیہ تقریب کا اہتمام کیا۔

اس ہندو تنظیم کا کہنا ہے کہ وہ ڈونلڈ ٹرمپ کی حمایت اس لیے کر رہی ہے کیونکہ ’دولت اسلامیہ کی شدت پسندی کے خلاف انھی سے انسانیت کی توقع کی جا سکتی ہے۔‘

ڈونلڈ ٹرمپ امریکہ میں مسلمانوں کے داخلے پر پابندی کے حامی ہیں اور ان کے اس موقف کے لیے ان پر عالمی سطح پر نکتہ چینی ہوتی رہی ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ EPA
Image caption پوجا کے وقت وہاں ہندو دیوی دیوتاؤں کی بہت سی مورتیاں جمع کی گئی تھیں جہاں پر ٹرمپ کی کامیابی کے لیے خصوصی پوجا کی گئی

ڈونلڈ ٹرمپ نے شدت پسندوں کے اہل خانہ کو قتل کرنے اور دولت اسلامیہ کو ختم کرنے کے لیے شام پر حملے کی بھی وکالت کی ہے۔

ہندو سینا کے تقریباً درجن بھر کارکن بدھ کے روز دہلی کے ایک پارک میں جمع ہوئے اور پوجا پاٹ کی۔ مسٹر ٹرمپ کی حمایت میں وہاں ایک بینر بھی آویزاں کیا گیا تھا۔

پوجا کے وقت وہاں ہندو دیوی دیوتاؤں کی بہت سی مورتیاں جمع کی گئی تھیں جہاں پر ٹرمپ کی کامیابی کے لیے خصوصی دعائیں مانگی گئیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ EPA
Image caption اس تنظیم کا ٹرمپ کی حمایت کے لیے ملک کے مختلف حصوں میں بہت سے پروگرام کرنے کا منصوبہ ہے

اس تنظیم کے بانی وشنو گپتا نے ایسوسی ایٹڈ پریس ایجنسی کو بتایا کہ ’صرف ڈونلڈ ٹرمپ ہی انسانیت کو بچا سکتے ہیں۔‘

دلی کے معروف انگریزي اخبار انڈین ایکسپریس سے بات چیت میں انھوں نے یہ بھی کہا کہ ان کی تنظیم کا ٹرمپ کی حمایت کے لیے ملک کے مختلف حصوں میں اس طرح کے بہت سے پروگرام کرنے کا منصوبہ ہے۔

ہندو سینا، شیو سینا، بجرنگ دل اور اس طرح کی دیگر بہت سی سخت گیر ہندو تنظیمیں انڈیا میں مسلمانوں کے خلاف اپنے موقف کے لیے معروف ہیں، اور مخالفین پر حملوں کی وجہ سے سرخیوں میں رہ چکی ہیں۔

اسی بارے میں