بھارتی کابینہ میں توسیع، 19 نئے وزرا شامل

تصویر کے کاپی رائٹ Dasarath Desk
Image caption اس کا مقصد آئندہ سال ہونے والے انتخابات میں اپنی جماعت کی جیت کے مواقع بڑھانا ہے

انڈیا کے وزیر اعظم نریندر مودی نے کابینہ میں بڑی توسیع کرتے ہوئے حکومت میں 19 نئے وزیروں کو شامل کیا ہے۔

ان نئے وزرا میں شامل سابق صحافی ایم جے اکبر اور ارجن رام میگھول نے منگل کے روز حلف اٹھایا۔

سینیئر وزرا سشما سوراج، راجناتھ سنگھ، ارون جیتلے اور منوہر پاریکر اپنے عہدوں پر برقرار ہیں۔

نامہ نگاروں کا کہنا ہے کہ نریندر مودی نے جن وزرا کو شامل کیا ہے ان میں سے تین کا تعلق اتر پردیش سے ہے اور اس کا مقصد آئندہ سال ہونے والے انتخابات میں اپنی جماعت کی جیت کے مواقع بڑھانا ہے۔

اس وقت مودی سرکار میں 13 وزرا شمالی اتر پردیش سے ہیں جہاں آئندہ سال انتخابات ہونے والے ہیں۔

نریندر مودی کی جماعت بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) نے سنہ 2014 کے عام انتخابات میں 80 میں سے 73 نشستیں حاصل کی تھیں اور اب وہ آئندہ سال ہونے والے اسمبلی انتخابات میں ایک بڑی کامیابی حاصل کرنے کی امید کر رہے ہیں۔

بی جے پی کو اس وقت ایوان بالا میں اکثریت حاصل نہیں ہے جس کی وجہ سے کئی اہم قانون سازیوں پر کام رکا ہوا ہے۔

گذشتہ 15 سالوں سے ریاست پر مقامی جماعتیں ہیں حکومت کر رہی ہیں۔

وزیر اعظم نریندر مودی نے دی انڈین ایکسپریس کو بتایا کہ ’گذشتہ 15 سالوں میں جو صورتحال ریاست میں پیدا کی گئی ہے اس کو ذہن میں رکھتے ہوئے ریاست کو بچانے کا واحد راستہ ترقیاتی کام ہیں اور صرف بی جے پی ہی ترقی کی ضمانت دے سکتی ہے۔‘

نامہ نگاروں نے اس موقع پر مزید کہا کہ نریندر مودی اب یہ چاہیں گے کہ ان کے وزرا ان کی پالیسیوں کو اتر پردیش میں مزید پھیلائیں تاکہ وٹر ان کی جانب راغب ہو سکیں۔

دریں اثنا اس رد و بدل میں ماحولیات کے وزیر پراکاش جاویدکر کو ترقی دے کر کابینہ کا عہدہ دے دیا گیا ہے۔

اسی بارے میں