BBCUrdu.com
  •    تکنيکي مدد
 
پاکستان
انڈیا
آس پاس
کھیل
نیٹ سائنس
فن فنکار
ویڈیو، تصاویر
آپ کی آواز
قلم اور کالم
منظرنامہ
ریڈیو
پروگرام
فریکوئنسی
ہمارے پارٹنر
آر ایس ایس کیا ہے
آر ایس ایس کیا ہے
ہندی
فارسی
پشتو
عربی
بنگالی
انگریزی ۔ جنوبی ایشیا
دیگر زبانیں
 
وقتِ اشاعت: Monday, 15 December, 2008, 13:48 GMT 18:48 PST
 
یہ صفحہ دوست کو ای میل کیجیئے   پرِنٹ کریں
المنتظر کی رہائی کیلئے مظاہرے
 
عراقی حکومت کے اہلکاروں نے صدر بش پر جوتے پھینکنے کے واقعہ کو شرمناک قرار دیا ہے
ہزاروں عراقیوں نے اس مقامی ٹی وی رپورٹر کی رہائی کا مطالبہ کیا ہے جنہوں نے ایک پریس کانفرنس کے دوران امریکی صدر جارج بش پر جوتے پھینکے تھے۔

لوگوں کا ہجوم بغداد کے صدر شہر کے علاقے میں جمع ہو گیا اور مطالبہ کرنے لگا کہ ’ہیرو منتظر زیدی کو حراست سے رہا کیا جائے۔ عراق کے ایک اور شہر نجف میں بھی زیرِ حراست صحافی کی رہائی کے لیے اسی طرح کے مظاہرے ہوئے ہیں۔

عراقی ٹی وی چینل البغدادیہ کے حکام نے بھی مطالبہ کیا ہے کہ المنتظر کو رہا کیا جائے۔

البتہ عراقی حکومت کے اہلکاروں نے اس واقعہ کو شرمناک قرار دیا ہے۔

حکومت کی طرف سے جاری ہونے والے ایک بیان میں کہا گیا ہے منتظر زیدی نے جو کچھ کیا جس میں صدر بش کی توہین بھی شامل ہے اس سے عراقی صحافیوں اور عراقی صحافت کی شہرت کو نقصان پہنچا ہے۔

حکومت نے یہ بھی مطالبہ کیا ہے کہ اس ٹی وی چینل کے مالکان آن ایئر معذرت کا اظہار کریں جس کے لیے المنتظر زیدی کام کرتے ہیں۔

ایک عراقی اہلکار کے مطابق صحافی المنتظر زیرِ تفتیش ہیں تاکہ یہ پتہ چلایا جا سکے کہ کیا کسی نے انہیں اس بات کے لیے پیسے تو نہیں دیئے تھے کہ وہ صدر بش پر جوتے پھینکیں۔

حکام نے بتایا ہے کہ المنتظر کے جوتے ثبوت کے طور پر سرکاری تحویل میں ہیں اور یہ ٹیسٹ بھی کیئے جا رہے ہیں کہ کہیں انہوں نےکوئی نشہ آور شے یا شراب تو نہیں پی رکھی تھی۔

المنتظر کے ٹی وی چینل نے ایک بیان میں کہا ہے کہ انہیں رہا کیا جائے کیونکہ وہ اس آزادیِ رائے کا اظہار کر رہے تھے جس کا سابق صدر صدام حسین کو اقتدار سے معزول کرتے ہوئے امریکہ نے عراقیوں سے وعدہ کیا تھا۔

ادارے کے مطابق: ’منتظر کے خلاف کسی بھی کارروائی کو آمرانہ حکومت کے عمل سے تعبیر کیا جائے گا۔‘

 
 
صدر بش اورصدر مشرف فائل فوٹو مواخذہ:امریکی میڈیا
’صدر بش کو مشرف سے دور رہنے کا مشورہ‘
 
 
الوداع پیرس
صدر بش یورپ کا الوداعی دورہ کررہے ہیں
 
 
جارج حبش 60 سالہ جدوجہد
پی ایف ایل پی کے بانی جارج حبش انتقال کر گئے
 
 
فائل فوٹو جارج حبش کا سفر
جارج حبش آخر تک اسرائیل کے مخالف رہے
 
 
بُش کے ’پیادے‘
فورٹ جیکسن کا فوجی تربیتی مرکز: تصاویر
 
 
‘بش نے خراب کیا‘
’بلیئر کا ذہن صدر بش کی وجہ سے خراب ہوا‘
 
 
تازہ ترین خبریں
 
 
یہ صفحہ دوست کو ای میل کیجیئے   پرِنٹ کریں
 

واپس اوپر
Copyright BBC
نیٹ سائنس کھیل آس پاس انڈیاپاکستان صفحہِ اول
 
منظرنامہ قلم اور کالم آپ کی آواز ویڈیو، تصاویر
 
BBC Languages >> | BBC World Service >> | BBC Weather >> | BBC Sport >> | BBC News >>  
پرائیویسی ہمارے بارے میں ہمیں لکھیئے تکنیکی مدد