تیل کی قیمتوں میں اضافے کی تنبیہہ

بین الاقوامی مالیاتی ادارے آئی ایم ایف نے خبردار کیا ہے کہ ایران سے تیل خریدنے پر پابندی لگنے کی صورت میں خام تیل کی قیمتوں میں بیس سے تیس فیصد تک اضافہ ہو جائے گا۔

آئی ایم ایف نے خبردار کیا ہے کہ یورپ کی جانب سے ایران پر مالیاتی پابندیاں لگنا تیل کی ناکہ بندی کے مترادف ہو گا اور اس صورت میں منڈیوں کے لیے اتنا ہی بڑا دھچکا ہو گا جتنا کہ گزشتہ سال لیبیا میں انقلاب کے دوران تھا۔

ایران اس وقت دنیا میں تیل کی کل پیداوار کا پانچ فیصد پیدا کرتا ہے۔

آئی ایم ایف کا کہنا ہے کہ اگر ایران خیلج میں آبنائے ہرمز سے تیل کی ترسیل کو روکنے کی دھمکی پر عمل کرتا ہے تو اسے کے زیادہ سنگین نتائج برآمد ہونگے۔

خیال رہے کہ خلیج فارس کے اس اہم بحری راستے سے دنیا بھر کی تیل کی ضروریات کا بیس فیصد حصہ گزرتا ہے اور حال ہی میں اپنی دھمکی کے بعد ایران نے اس علاقے میں درمیانے فاصلے تک مار کرنے والے میزائلوں کے کئی تجربات بھی کیے ہیں اور امریکہ کو خبردار کیا ہے کہ وہ اپنا بحری بیڑا اس علاقے میں دوبارہ نہ بھیجے۔