صوابی میں لڑکیوں کا پرائمری سکول تباہ

پاکستان کے صوبۂ خیبر پختونخوا کے ضلع صوابی میں مسلح افراد نے لڑکیوں کے ایک سرکاری پرائمری سکول کی عمارت کو دھماکہ سے تباہ کردیا۔

پولیس اہلکار فضل خان نے بی بی سی کو بتایا کہ اتوار اور پیر کی درمیانی شب صوابی شہر سے کوئی چار کلومیٹر دور شمال کی جانب ٹوپی روڈ پر علاقہ میاں ڈھیری میں نامعلوم مُسلح افراد نے لڑکیوں کے ایک پرائمری سکول میں تین مقامات پر دھماکہ خیز مواد نصب کیا۔

ان کے بقول دھماکے سے تین کمروں پر مُشتمل سکول مکمل طور پر تباہ ہوگیا جبکہ چار دیواری کو بھی نقصان پہنچا۔

بی بی سی کے نامہ نگار دلاورخان وزیر نے بتایا کہ پولیس نے نامعلوم افراد کے خلاف ایف آئی آر درج کر لی ہے تاہم اب تک کسی گرفتاری کی اطلاع نہیں ہے۔