گیلانی حکومت کے اقدامات کو آئینی تحفظ

پاکستان کے سرکاری ٹی وی کے مطابق سابق وزیرِاعظم یوسف رضا گیلانی کی حکومت کے چھبیس اپریل سے انیس جون تک کے اقدامات کو آئینی تحفظ فراہم کرنے کے لیے صدارتی آرڈیننس جاری کر دیا گیا ہے۔

آرڈنینس کے تحت ان اقدامات کی آئینی حیثیت کو چیلنج نہیں کیا جا سکے گا۔

اس آرڈنینس کے مطابق پاکستان، اس دورانیہ میں کیے گئے تمام بین الاقوامی معاہدوں کا بھی پابند رہے گا۔

پاکستان کی سپریم کورٹ نے سابق وزیرِاعظم کو توہینِ عدالت کے جرم میں پاکستان کی قومی اسمبلی کی رکنیت کے لیے نااہل قرار دے دیا تھا۔

عدالت نے انیس جون کو دیے گئے اپنے فیصلے میں وزیرِ اعظم کی نااہلی کی مدت کا آغاز چھبیس اپریل سے کیا جس کی وجہ سے اس صدارتی آرڈنینس کی ضروت پیش آئی۔