لاہور: سرجیت سنگھ کو رہا کردیا گیا

جاسوسی کے الزام میں قید بھارتی سرجیت سنگھ کو آج لاہور کی کوٹ لکھپت جیل سے رہا کردیا گیا ہے۔

ان کو پاکستانی حکام نے واہگہ پر بھارتی حکام کے حوالے کیا۔ سرجیت سنگھ نے رہائی پر میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا ’قید میں مجھے اپنا حاندان برا یاد آتا تھا۔ میں دوبارہ پاکستان نہیں آؤں گا کیونکہ مجھے جاسوسی کے الزام میں سزا دی گئی تھی اور یہ نہ ہو کہ میں آئندہ آؤں تو پھر سے مجھ پر شک کیا جائے۔‘

سرجیت سنگھ کی سزا سنہ 1989 میں اس وقت کے صدر غلام اسحاق خان نے وزیراعظم بینظیر بھٹو کی درخواست پر معاف کرتے ہوئےعمر قید میں تبدیل کر دیا تھا۔

سرجیت سنگھ کو جنرل ضیاالحق کے دور حکومت میں پاک بھارت سرحد کے قریب سے جاسوسی کے الزام میں گرفتار کیا گیا تھا۔