روس ورلڈ ٹریڈ آرگنائزیشن کا رکن بن گیا

آخری وقت اشاعت:  بدھ 22 اگست 2012 ,‭ 02:23 GMT 07:23 PST

اٹھارہ سال کے طویل مذاکرات کے بعد روس باضابطہ طور پر ’ورلڈ ٹریڈ آرگنائزیشن‘ یعنی عالمی تنظیم برائے تجارت کا رکن بن گیا ہے۔

اس تنظیم کی رکنیت حاصل کرنے کے لیے روس نے اشیاءِ خورد و نوش اور گاڑیوں سمیت اپنی درآمدات پر ڈیوٹی کم کرنے کی منظوری دے دی۔

اس کے علاوہ روس نے ٹیلی کام اور مالیات کی صنعتوں میں غیر ملکی کمپنیوں پر حکومتی نگرانی کو بھی کم کرنے پر اتفاق کیا ہے۔

سنہ دو ہزار ایک میں چین کی ورلڈ ٹریڈ آرگنائزیشن میں شمولیت کے بعد روس دنیا کی واحد بڑی معیشت تھی جو کہ اس تنظیم کی رکن نہیں تھی۔

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔