نائجیریا کی سینکڑوں خواتین قید

آخری وقت اشاعت:  ہفتہ 29 ستمبر 2012 ,‭ 21:53 GMT 02:53 PST

سعودی عرب میں تعینات نائجیریا کے سفیر نے کہا ہے کہ سعودی حکام نے انھیں نائجیریا سے تعلق رکھنے والی اُن سینکڑوں خواتین سے ملنے روک دیا جو جدہ ایئرپورٹ پر حکام کی تحویل میں ہیں۔

سعودی حکام نے کہا ہے کہ یہ خواتین حج کی عرض سے جدہ پہنچیں تھیں لیکن ان کے ساتھ کوئی مرد نہیں تھا۔

سعودی حکام ایک ہزار کے قریب خواتین کو پہلے ہی واپس بھیجا جا چکا ہے۔

نائجیریا کے سفیر ابوبکر سہو بونو کا کہنا ہے کہ یہ معاملہ سعودی حکومت کے ساتھ اعلی ترین سطح پر اٹھایا جائے گا۔

سعودی حکام ایک عرصے سے اس بات پر تشویش کا اظہار کرتے رہے ہیں کہ افریقی سے حج کی غرض سے آنے والے والے بہت سے مرد اور خواتین واپس نہیں جاتے جس سے ملک میں جشم فروشی اور دیگر جرائم جنم لیتے ہیں۔

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔