اسرائیلی فوج کی شام پر فائرنگ

آخری وقت اشاعت:  اتوار 11 نومبر 2012 ,‭ 15:45 GMT 20:45 PST

اسرائیلی فوج کا کہنا ہے کہ انھوں نے شام کو متنبہ کرنے کے لیے فائرنگ کی ہے۔ ان کا کہنا ہے اس سے قبل شام کی جانب سے مارٹر گولے داغے گئے تھے اور گولان کی پہاڑیوں پر قائم اسرائیل کی ایک فوجی چوکی اس کی زد میں آ گئی تھی۔

یہ انیس سو تہتر کی مشرق وسطی کی جنگ کے بعد پہلا موقع ہے جب اسرائیلی فوج نے شامی فوج پر فائرنگ کی ہو۔

یہ تازہ واقعہ اسرائیل کے قبضے والی گولان کی پہاڑیوں پر شام کی گولی باری کے دوران ایک گاڑی کے زد میں آجانے کے چند دنوں بعد پیش آیا ہے۔

یہ دونوں ممالک باقاعدہ طور پر جنگ کی حالت میں ہیں اور اقوام متحدہ کی فوج ان کے درمیان بفر زون میں موجود ہے۔

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔