’لانگ مارچ کے خلاف کارروائی پر غور‘

آخری وقت اشاعت:  بدھ 16 جنوری 2013 ,‭ 18:25 GMT 23:25 PST

پاکستان کے وزیر داخلہ رحمٰن ملک نے کہا ہے کہ حکومت ڈاکٹر طاہرالقادری کے لانگ مارچ کو منتشر کرنے کے لیے کارروائی کرنے پر غور کر رہی ہے۔

انہوں نے اسلام آباد میں میڈیا سے بدھ کو رات گئے بات کرتے ہوئے کہا کہ وہ لانگ میں شریک خواتین اور بچوں کے خلاف کوئی آپریشن نہیں کریں گے بلکہ ایکشن لیں گے۔

انہوں نے کہا کہ ایکشن کسی بھی وقت ہو سکتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ وہ لال مسجد کی طرح کا آپریشن نہیں کریں گے بلکہ جدید ٹیکنالوجی کے استعمال سے کارروائی کریں گے۔

انہوں نے ڈاکٹر طاہر القادری سے مطالبہ کیا کہ چلے جائیں۔

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔