بھارتی وزیر خارجہ کو مذاکرات کی پیشکش

آخری وقت اشاعت:  جمعرات 17 جنوری 2013 ,‭ 04:35 GMT 09:35 PST

پاکستان کی وزیرِ خارجہ حنا ربانی کھر نے کشمیر کے متنارع علاقے کو تقسیم کرنے والی لائن آف کنٹرول پر حالیہ کشیدگی کے حل کے لیے پاکستان اور بھارت کے وزرائے خارجہ کے مذاکرات کی پیشکش کی ہے۔

کنٹرول لائن پر دو طرفہ فائرنگ کے واقعات میں اب تک پاکستان اپنے تین جبکہ بھارت دو فوجیوں کی ہلاکت کا دعویٰ کرتا ہے۔

نیویارک سے جاری ہونے والے بیان میں حنا ربانی کھر نے کہا کہ لائن آف کنٹرول پر کشیدگی جنوبی ایشیا میں امن و استحکام کے مفاد میں نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ دس دن کی جھڑپوں نے دونوں ممالک کے تعلقات پر سوال اٹھائے ہیں لیکن پاکستان اس تنازع کے خاتمے کے لیے بھارتی اور پاکستانی وزرائے خارجہ کی بات چیت کے لیے تیار ہے۔

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔