کوئٹہ دھماکہ: ہلاکتیں اکیاسی، صوبے میں سوگ

آخری وقت اشاعت:  اتوار 17 فروری 2013 ,‭ 05:13 GMT 10:13 PST

پاکستان کے صوبہ بلوچستان کے دارالحکومت کوئٹہ میں سنیچر کو ہونے ولے بم دھماکے میں ہلاک ہونے والے افراد کی تعداد اکیاسی تک پہنچ گئ ہے جبکہ ایک سو آسی سے زیادہ افردا زخمی ہیں۔

ہلاک ہونے والوں میں سے بیشتر تر ہزارہ برادری سے تعلق رکھنے والے شیعہ ہیں۔

بلوچستان پولیس کے ترجمان ڈی آئی جی انویسٹی گیشن فیاض سنبل نے اتوار کو بی بی سی سے بات کرتے ہوئے اکیاسی ہلاکتوں کی تصدتق کی ہے جبکہ بلوچستان شیعہ کانفرنس کے رہنما داؤد آغا نے بتایا کہ اس واقعے میں ہلاکتوں کی تعداد آسی سے زائد ہے۔

اس واقعے کے خلاف کوئٹہ شہر میں مکمل شٹر ڈاون ہڑتال کی جارہی ہے جبکہ سرکاری طور پر صبوبے بھر میں سوگ منایا جارہا ہے۔ اور تمام سرکاری عمارتوں پر پرچم سرنگوں ہے۔

پختون خوا ملی عوامی پارٹی سمیت کئی سیاسی جماعتوں نے شیعہ مسلک سے تعلق رکھنے والے تنظیموں کی طرف سے ہڑتال کے کال کی حمایت کی ہے۔

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔