خیبر پختونخوا اسمبلی تحلیل کرنے کا مشورہ

آخری وقت اشاعت:  منگل 19 مارچ 2013 ,‭ 09:27 GMT 14:27 PST

پاکستان کے صوبہ خیبر پختونخوا کے وزیراعلیٰ نے گورنر شوکت اللہ کو صوبائی اسمبلی تحلیل کرنے کا مشورہ دیا ہے۔

پاکستان کے سرکاری ذرائع ابلاغ کے مطابق گورنر نے اسمبلی تحلیل کرنے کی ایڈوائس پر دستخط کر دیے ہیں اور منگل کی رات کو اسمبلی تحلیل ہو جائے گی۔

صوبہ خیبر پختونخوا کے وزیر اعلیٰ امیر حیدر خان ہوتی اور اپوزیشن رہنما اکرام درانی نے رواں ماہ کی پندرہ تاریخ کو نگراں وزیر اعلیٰ کے عہدے کے لیے ریٹائرڈ جسٹس طارق پرویز کو نامزد کر دیا تھا۔

دریں اثناء صوبہ سندھ کے وزیراعلیٰ سید قائم علی شاہ نے صوبائی اسمبلی تحلیل کرنے کے لیے گورنر کو مشورہ دیا ہے۔

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔