بم کی اطلاع، آئفل ٹاور خالی کرا لیا گیا

فرانس کے دارالحکومت پیرس میں بم کی اطلاع کے بعد آئفل ٹاور کو خالی کروا لیا گیا ہے۔

حکام کے مطابق جس وقت فون پر بم رکھے جانے کی دھماکی موصول ہوئی اس وقت آئفل ٹاور میں 14000 افراد موجود تھے جن کو علاقہ خالی کرنے کا حکم دیا گیا۔

فرانس کی انسداد دہشت گردی کی پولیس کا کہنا ہے کہ اس علاقے کی تلاشی میں کئی گھنٹے لگ سکتے ہیں۔

آئفل ٹاور میں بم رکھنے کی اطلاع ماضی میں دی گئی ہیں۔ سنہ 2011 میں آئفل ٹاور میں موجود چار ہزار افراد کو جانے کا حکم دیا گیا تھا۔

فرانسیسی میڈیا کے بقول سیاحوں اور سٹاف ممبران کو شام چھ بجے جی ایم ٹی آئفل ٹاور سے نیچے آنے کا کہا گیا۔ اس کے علاوہ ٹاور میں موجود سکیورٹی گارڈز کو بھی ٹاور خالی کرنے کا کہا گیا۔