جمشید دستی کو رہا کر دیا گیا

پیپلز پارٹی کے سابق ایم این اے جمشید دستی کو ملتان سنٹرل جیل سے رہا کر دیا گیا ہے۔

جیل سے باہر ان کے حامیوں نے ان پر پھولوں کی پتیاں نچھاور کیں۔

جمشید دستی کو جعلی ڈگری پیش کرنے کے جرم میں تین سال قید کی سزا سنا کر جیل بھیج دیا گیا تھا۔

انھوں نے جیل کے باہر میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ان کی ڈگری اصلی ہے۔ انھوں نے کہا کہ این اے 177 اور 178 سے انتخابات میں حصہ لیں گے۔