استنبول: پولیس کی غازی پارک میں کارروائی

ترکی کے شہر استنبول میں پولیس نے غازی پارک میں جمع مظاہرین کے خلاف کارروائی شروع کر دی ہے۔

پولیس پارک میں مظاہرین کے خیمے اکھاڑ رہی ہے اور مظاہرین کو منشتر کرنے کے لیے پانی کی توپ اور آنسو گیس کا استعمال کیا۔

پولیس کی مظاہرین کے خلاف کارروائی سے چند گھنٹے پہلے ترک وزیراعظم رجب طیب اردگان نے مظاہرین کو خبردار کیا تھا کہ وہ علاقے سے نکل جائیں۔

جمعہ کو ترکی کی حکومت کا کہنا تھا کہ وہ مظاہرین کے ساتھ مذاکرات کے بعد اور اس بارے میں عدالت کا فیصلہ آنے تک غازی پارک کی تعمیر روکنے پر رضا مند ہو گئی ہے۔

خیال رہے کہ استنبول میں ایک عوامی باغ کی جگہ پر سلطنتِ عثمانیہ دور کی بیرکس اور اس میں ایک شاپنگ سینٹر کی تعمیر کا منصوبہ سامنے آنے کے بعد ملک میں حکومت مخالف مظاہرے شروع ہو گئے جن کا دائرہ انقرہ سمیت دیگر شہروں تک پھیل گیا تھا۔

رجب طیب ارگان کی حکومت سنہ 2002 سے ترکی میں برسرِ اقتدار ہے۔ ان کی جماعت اے کے پارٹی کی سیاسی جڑیں اسلام میں ہیں لیکن اردگان کہتے رہے ہیں کہ وہ ترکی میں سیکولر ازم کے حامی ہیں۔