کابل: افغان صدارتی محل پر حملہ

افغانستان کے دارالحکومت کابل میں طالبان نے صدارتی محل کے قریب سکیورٹی فورسز پر حملہ کیا ہے۔

بی بی سی کے نامہ نگار کے مطابق حملہ آوروں اور صدارتی محل کے محافظوں اور قریب ہی واقع سی آئی اے کے سٹیشن کے عملے کے درمیان جھڑپیں ہوئی ہیں۔

افغان طالبان کا کہنا ہے کہ یہ حملہ انھوں نے کیا ہے۔

حملہ صدارتی محل کے قریب شش داراک کے علاقے میں مقامی وقت کے مطابق صبح 6:30 بجے شروع ہوا۔

حملے کے دوران شہر کے مرکز میں فائرنگ اور زوردار دھماکے ہوئے جس سے ملبا ہوا میں اْڑ گیا۔

شدت پسندوں نے ابتدا میں صدارتی محل کے مشرقی گیٹ کو نشانہ بنایا جہاں درجنوں صحافی صدر حامد کرزئی کے نیوز کانفرنس کے لیے جمع تھے۔

بی بی سی کے بلال سروری جو نیوز کانفرنس کے لیے جمع صحافیوں میں شامل تھے کہتے ہیں کہ ان کے سر کے اوپر سے گولیاں گزریں اور وہ فائرنگ کی وجہ سے پناہ لینے پر مجبور ہوئے۔